اقوام متحدہ کو لبنان کی بین الاقوامی تحفظ کے سایہ کے ختم ہونے کا خدشہ - الشرق الاوسط اردوالشرق الاوسط اردو
الشرق اردو
به قلم:
کو: ہفتہ, 7 ستمبر, 2019
0

اقوام متحدہ کو لبنان کی بین الاقوامی تحفظ کے سایہ کے ختم ہونے کا خدشہ

کل صدر مائکل عون کو لبنان میں اقوام متحدہ کے کوآرڈینیٹر کا استقبال کرنے کے دوران دیکھا جا سکتا ہے

نیو یارک: علي بردى – بيروت: الشرق الاوسط

        کل لبنان کے صدر مائکل عون نے لبنان میں اقوام متحدہ کے خصوصی کوآرڈینیٹر جان کوبک سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ بیروت کے جنوبی نواحی علاقوں پر حالیہ اسرائیلی حملہ اقوام متحدہ کی اس قرارداد کی خلاف ورزی ہے جسے 1701 نمبر والی بین الاقوامی فیصلہ کے جاری ہونے کے بعد مکمل کیا گیا تھا اور عون نے پرزور انداز میں کہا کہ لبنان کی خودمختاری پر ہونے والے ہر قسم کے حملہ کا مقابلہ اپنے دفاع میں جائز ہوگا اور اس سلسلہ میں رونما ہونے والے سارے نتائج کی ذمہ داری اسرائیل کی ہوگی۔

       اقوام متحدہ میں سفارت کاروں نے لبنان کے بارے میں اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کے ممبروں کے درمیان بڑھتے ہوئے اختلاف رائے کے خدشات کا اظہار کیا ہے اور یہ بھی کہا کہ اس کی وجہ سے لبنان کو حاصل اس بین الاقوامی تحفظ کے سایہ کا خاتمہ ہو جائے گا جس کی وجہ سے لبنان میں علاقائی کشیدگیوں اور شامی فائل سے پیدا ہونے والی نازک صورتحال کے باوجود نسبتا استحکام باقی ہے۔(۔۔۔)

ہفتہ 08 محرم الحرام 1441 ہجری – 07 ستمبر 2019ء – شمارہ نمبر [14893]

الشرق اردو

الشرق اردو

«الشرق الاوسط» چار براعظموں کے 12 شہروں میں بیک وقت شائع ہونے والا دنیا کا نمایاں ترین روزنامہ عربی اخبار ہے، 1978ء میں لندن كي سرزميں پر میں شروع ہونے والا الشرق الاوسط آج عرب اور بین الاقوامی امور ميں نمایاں مقام حاصل كر چکا ہے جو اپنے پڑھنے والوں کے لئے تفصیلی تجزیے اور اداریے کے ساتھ ساتھ پوری عرب دنیا کی جامع ترین معلومات پیش کرتا ہے- «الشرق الاوسط» دنیا کے کئی بڑے شہروں میں بیک وقت سیٹلائٹ کے ذریعہ منتقل ہونے والا عربی زبان کا پہلا روزنامہ اخبار ہے، جیسا کہ اس وقت یہ واحد اخبار ہے جسے عظیم الشان بین الاقوامی اداروں کے لئے عربی زبان میں شائع ہونے کے حقوق حاصل ہیں جہاں سے «واشنگٹن پوسٹ»،

More Posts - Website - Twitter - Facebook

شيئر

تبصرہ کریں

XHTML/HTML <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>