قیس "قرطاج پیلس" کی طرف گامزن - الشرق الاوسط اردوالشرق الاوسط اردو
الشرق اردو
به قلم:
کو: پیر, 14 اکتوبر, 2019
0

قیس "قرطاج پیلس” کی طرف گامزن

گذشتہ روز دارالحکومت میں اپنا ووٹ ڈالنے کے لئے قطار میں کھڑے تیونس کی عوام کو دیکھا جاسکتا ہے(ا۔ب)

 تیونس: منجی سعیدانی

آزاد امیدوار ، آئینی قانون کے پروفیسر ، قیس سعید ، تیونس کےصدارتی محل ” قرطاج” میں داخل ہونے کے قریب ہیں ، اس سے قبل گذشتہ روز صدارتی انتخابات کے دوسرے مرحلے کے لئے ہوئے ایگزٹ پول کے نتائج نے ان کے حریف "قلب تیونس” پارٹی کے امیدوار نبیل قروی پر ان کی نمایاں برتری دکھائی ہے۔ ابتدائی نتائج میں سعید نے تقریباً 72 فیصد ووٹ حاصل کئے جبکہ قروی کو صرف تقریباً 27 فیصد ہی حاصل ہوئے ، اسی طرح نتائج میں حصہ لینے والوں کی شرح تقریباً 70 فیصد درج کی گئی ہے۔ 61 سالہ سعید لامرکزی طاقت کو مستحکم کرنے اور خطوں پر اس کو تقسیم کرنے کی دعوت دیتے ہیں ، انہوں نے 2011 میں ہوئے تیونس انقلاب میں”نوکری ، آزادی اور قومی وقار” کے نعرے اپنائے تھے ۔ اسی طرح انہوں نے یہ کہتے ہوئے "جھوٹے وعدے کرنے” سے بھی انکار کردیا کہ ، "یہ وہ لوگ ہیں جو صرف خیالات کا تصور کرتے ہیں ، جبکہ وہ ان پر عمل درآمد کرتے ہیں.(…)(پیر  15  صفر 1441 ہجرى/ 14  اکتوبر 2019ء شماره نمبر 14913)

الشرق اردو

الشرق اردو

«الشرق الاوسط» چار براعظموں کے 12 شہروں میں بیک وقت شائع ہونے والا دنیا کا نمایاں ترین روزنامہ عربی اخبار ہے، 1978ء میں لندن كي سرزميں پر میں شروع ہونے والا الشرق الاوسط آج عرب اور بین الاقوامی امور ميں نمایاں مقام حاصل كر چکا ہے جو اپنے پڑھنے والوں کے لئے تفصیلی تجزیے اور اداریے کے ساتھ ساتھ پوری عرب دنیا کی جامع ترین معلومات پیش کرتا ہے- «الشرق الاوسط» دنیا کے کئی بڑے شہروں میں بیک وقت سیٹلائٹ کے ذریعہ منتقل ہونے والا عربی زبان کا پہلا روزنامہ اخبار ہے، جیسا کہ اس وقت یہ واحد اخبار ہے جسے عظیم الشان بین الاقوامی اداروں کے لئے عربی زبان میں شائع ہونے کے حقوق حاصل ہیں جہاں سے «واشنگٹن پوسٹ»،

More Posts - Website - Twitter - Facebook

شيئر

تبصرہ کریں

XHTML/HTML <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>