ایران کی نئی خلاف ورزی کے بعد روس اور یورپ میں بے چینی

ایران کی نئی خلاف ورزی کے بعد روس اور یورپ میں بے چینی

بدھ, 6 November, 2019 - 10:15
        کل برطانیہ فرانس اور جرمنی نے ایران کو یورینیم کی افزودگی کو منجمد کرنے والی کاروائیوں کو ازسر نو شروع کرنے کے فیصلہ کو ختم کرنے کی دعوت دی ہے اور فوری طور پر جوہری معاہدہ کی پابندی کرنے کی دعوت دی ہے جبکہ روس نے اس خلاف ورزی سے اپنی بے چینی کا اظہار کیا ہے۔
        ایرانی صدر حسن روحانی نے آج تہران کے جنوب میں فردو کمپنی میں آئ آر ون کی نسل کے ایک مرکزی دفاعی مشین 1044 کو منظبط کرنے کا اعلان کیا ہے اور معاہدہ کے فریق کو تہران کے مطالبہ کو پورا کرنے کے سلسلہ میں مزید دا ماہ کی مہلت دی ہے ورنہ ان کا ملک مزید پابندیوں سے آزاد ہو جائے گا۔
        یورپ یونین نے ایران کو اس معاہدہ کو ختم کرنے کے اقدامات سے بچنے کی دعوت دی ہے جس کا دفاع کرنا بہت زیادہ سخت ہو گیا ہے جبکہ روس کی صدارتی ترجمان ڈیمٹری بیسکوف نے کہا کہ ان کا ملک اس کشیدگی کی نگرانی کر رہا ہے۔
بدھ 9 ربیع الاول 1441 ہجرى - 06 نومبر 2019ء شماره نمبر [14953]

انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا