قروی کی پارٹی کے ساتھ ہونے والے معاہدہ کے بعد غنوشی ٹیونسی پارلیمنٹ کے اسپیکر متعین

قروی کی پارٹی کے ساتھ ہونے والے معاہدہ کے بعد غنوشی ٹیونسی پارلیمنٹ کے اسپیکر متعین

جمعرات, 14 November, 2019 - 08:00
گذشتہ روز "النهضہ" کے رہنما راشد الغنوشي کو ٹیونسی پارلیمنٹ کے اجلاس کے دوران دیکھا جا سکتا ہے
        کل اسلام پسند "النهضہ" پارٹی کے صدر اور بانی راشد الغنوشي ووٹوں کی اکثریت سے ٹیونسی پارلیمنٹ کے اسپیکر منتخب ہوئے ہیں اور نیوز ایجنسیوں نے بزنس مین نبیل قروی کی سربراہی میں اس پارٹی کے ذرائع کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ پارلیمنٹ میں دوسری جماعت یعنی "ٹیونس کا دل" نامی پارٹی کے ساتھ ہونے والے معاہدہ کے بعد الغنوشي کو 123 ووٹ ملس ہیں۔
      "ٹیونس کا دل" نامی پارٹی کے بانی نے پچھلے پریس بیانات میں "النهضہ" پارٹی کے ساتھ اتحاد کے امکان سے انکار کیا ہے بلکہ انہوں نے یہاں تک کہ صدارتی مہم کے دوران منی لانڈرنگ اور ٹیکس چوری کے الزام میں ان کی گرفتاری کے پیچھے دیا اسی پارٹی کا ہاتھ ہے۔

       الغنوشي نے پارلیمنٹ کی صدارت کے لئے تین دیگر امیدواروں کے ساتھ مقابلہ کیا ہے اور "النهضہ" پارٹی کو پارلیمنٹ میں پہلا مقام 52 سیٹوں کے ذریعہ ملی ہے اور یہ تعداد 217 نائبین کے چوتھائی سے بھی کم ہے۔ اسی وجہ سے انہیں باقی پارٹیوں کے ساتھ مشاورت کرنے پر مجبور ہونا پڑا تاکہ وہ اپنی حکومت تشکیل کرنے کے لئے پارلیمنٹ کے 109 ارکان کی توثیق حاصل کرسکے۔(۔۔۔)
معرات 17 ربیع الاول 1441 ہجرى - 14 نومبر 2019ء شماره نمبر [14961]

انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا