حفتر کی افواج کے ذریعہ طرابلس کے جنوب میں وفاقی حکومت کے دفاعی نظام پر حملہ

حفتر کی افواج کے ذریعہ طرابلس کے جنوب میں وفاقی حکومت کے دفاعی نظام پر حملہ

ہفتہ, 30 November, 2019 - 12:45
         لیبیا کی نیشنل آرمی سے وابستہ الکرامہ آپریشنز روم کے میڈیا سنٹر نے فضائی حملوں اور ابتدائی فائرنگ کے بعد دار الحکومت طرابلس کے جنوب میں واقع الہیرا کے پورے علاقے پر کنٹرول کرنے کے لئے اپنی فورسز کی پیشرفت کا اعلان کیا ہے۔
        خلیفہ حفتر کی سربراہی میں فوج کی 166 ویں انفنٹری بٹالین نے کہا ہے کہ اس نے اس علاقے پر مکمل کنٹرول حاصل کر لیا ہے اور جمعہ کے روز ایک مختصر بیان میں یہ بھی کہا ہے کہ عزیزیہ کی طرف مسلسل پیشرفت ہو رہی ہے اور اگر قومی فوج اپنی نئی عجگہوں کو برقرار نہ رکھ سکی تو وہ طرابلس کے جنوب میں وفاقی حکومت کی افواج کے دفاعی نظام پر تو حملہ کر ہی سکتی ہے۔
        یہ ایسے وقت میں سامنے آیا ہے جب نیشنل آرمی کے ترجمان میجر جنرل احمد المسماری نے کہا تھا کہ ان کی فورسز نے علی کنہ کی سربراہی میں وفاقی حکومت کی فورسز کی ناکام کوشش کے بعد 25 مسلح گاڑیوں تباہ کر دیا ہے، درجنوں تخریب کار دہشت گرد عناصر کو ہلاک ہے اور غیر معمولی بارود کو ضبط کیا ہے اور یہ سب جنوبی لیبیا میں فیل اور شرارہ نامی تیل کے کنؤوں پر قبضہ کرنے کے لئے کیا گیا ہے۔(۔۔۔)
ہفتہ 3 ربیع الآخر 1441 ہجرى - 30 نومبر 2019ء شماره نمبر [14976]

انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا