ادلب کے دیہی علاقوں میں کئے جانے والے حملوں میں قتل عام

ادلب کے دیہی علاقوں میں کئے جانے والے حملوں میں قتل عام

اتوار, 8 December, 2019 - 13:30
گذشتہ روز ادلب کے دیہی علاقوں میں واقع البارہ پر ہونے والے روسی حملہ کے بعد کے منظر کو دیکھا جا سکتا ہے (اے ایف پی)
        گذشتہ روز ادلب کے دیہی علاقوں پر روس اور شام کی طرف سے ہونے والے حملوں کے نتیجہ میں 19 شہری ہلاک ہوئے ہیں جن میں 8 بچے ہیں اور یہ علاقے شمال مغربی شام میں ماسکو اور انقرہ کے مابین افہام وتفہیم کے علاقوں ماتحت ہیں۔
        انسانی حقوق کے شامی رصدگاہ نے اطلاع دی ہے کہ ہلاکتوں کی تعداد میں اضافہ ہو سکتا ہے کیونکہ ان میں جو افراد زخمی ہیں ان کی حالت نازک ہے۔
        چند مہینے قبل ادلب گورنریٹ میں ایک معاہدہ طے پایا تھا جس کی بنیاد پر حکومت فورسز کی طرف سے حملے نہ کئے جانے کی بات کہی گئی تھی لیکن ادھر چند ہفتوں سے وہاں ایسی جھڑپوں اور بم دھماکوں کا سامنا ہے جس میں دسیوں شہری اور جنگجو ہلاک ہو چکے ہیں۔
       ہفتہ کے روز روسی فضائی کی طرف سے ہونے والے حملہ میں بلیون گاوں کے 9 شہری ہلاک ہوئے ہیں جن میں 3 بچے بھی شامل ہیں اور جنوبی ادلب کے دیہی علاقوں میں واقع الباراہ گاؤں کے 4 شہری ہلاک ہوئے ہیں جن میں ایک بچہ بھی شامل ہے اور شامی رصدگاہ کے مطابق حکومتی فورسز نے ادلب کے جنوب میں واقع آبدیتا گاؤں کو دھماکہ خیز بیرل کے نشانہ بنایا ہے جس میں 3 بچوں سمیت 5 شہری ہلاک ہوئے ہیں اور مشرقی صوبہ کے ایک گاؤں پر ہونے والے حملہ میں ایک بچہ بھی ہلاک ہوا ہے۔
اتوار 11 ربیع الآخر 1441 ہجرى - 08 دسمبر 2019ء شماره نمبر [14985]

انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا