بیروت میں فرقہ وارانہ کشیدگی کے بعد فساد کو روکنے کی کوششیں

بیروت میں فرقہ وارانہ کشیدگی کے بعد فساد کو روکنے کی کوششیں

بری اور حریری کی طرف سے بیداری کی دعوت اور تخریب کاریاں اور فسادات وسیع پیمانے پر
بدھ, 18 December, 2019 - 14:45
گذشتہ روز بری اور حریری کو آپس میں ملاقات کے دوران دیکھا جا سکتا ہے (نیشنل ایجنسی)
        پیر کی رات ایک فرقہ وارانہ کشیدگی کے بعد  بیروت میں بغاوت کی روک تھام کے لئے اعلی سطح پر کوششیں ہوئیں اور پارلیمنٹ کے اسپیکر نبیہ بری اور وزیر اعظم سعد حریری نے مشترکہ انداز میں اس بات پر زور دیا کہ اس مرحلہ میں تمام لبنانی بیداری کا ثبوت دیں اور اس فتنہ کی طرف متوجہ نہ ہوں جسے کچھ لوگ بھڑ کا رہے ہیں اور ملک کو اس کی بھٹی میں کھینچنے کی سخت کوشش کر رہے ہیں کرنا اور اس کا سامنا صرف سول امن اور قومی اتحاد کو برقرار رکھنے اور اشتعال انگیزی کو مسترد کرنے سے ہی کیا جا سکتا ہے۔
        اسی پوزیشن پر پارلیمانی فنانس اینڈ بجٹ کمیٹی کے ممبروں نے بھی اتفاق کیا ہے اور  انھوں نے اس بات پر بھی زور دیا ہے کہ تنازعہ ایک سرخ لکیر ہے اور علما کی سطح پر ہونے والی تحریکوں میں کسی قسم کی ایسی گفتگو نہ ہو جو فرقہ واریت کو بھڑکا سکے۔(۔۔۔)
بدھ 21 ربیع الآخر 1441 ہجرى - 18 دسمبر 2019ء شماره نمبر [14995]

انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا