حوثیوں کے ذریعہ جائز حکومت کے افراد کے خلاف سزائے موت کے احکام کی وجہ سے کشیدگی

حوثیوں کے ذریعہ جائز حکومت کے افراد کے خلاف سزائے موت کے احکام کی وجہ سے کشیدگی

بدھ, 18 March, 2020 - 18:30
باغی حوثی ملیشیاؤں نے یمن کی قانونی حکومت کے افراد کے خلاف کشیدگی پیدا کر دیا ہے کیونکہ گزشتہ روز ان ملیشیاؤں سے منسلک ایک عدالت نے ان 17 فوجی رہنماؤں کے خلاف سزائے موت کا فیصلہ سنایا ہے جس میں نائب صدر علی محسن الاحمر اور وزیر دفاع محمد علی المقدشی شامل ہیں۔
یمن کے دار الحکومت میں حقوق انسان کے ذرائع کے مطابق اس بات کی اطلاع ملی ہے کہ یہ ملیشیائیں یمنی خواتین کے خلاف اپنے باغیانہ رویوں کو جاری رکھی ہوئی ہیں اور ان لوگوں نے صنعاء میں نسواں اسکولوں کی 7 پرنسپلوں کو اغوا کرلیا ہے۔(۔۔۔)
بدھ 23 رجب المرجب 1441 ہجرى - 18 مارچ 2020ء شماره نمبر [15086]

انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا