فاخوری کیس کی وجہ سے لبنانی فوجی عدالت کے صدر کا تختہ پلٹا

فاخوری کیس کی وجہ سے لبنانی فوجی عدالت کے صدر کا تختہ پلٹا

ہفتہ, 21 March, 2020 - 13:00
استعفی دینے والے لبنانی فوجی عدالت کے سربراہ بریگیڈیئر حسین العبد اللہ کو فوجی وردی میں دیکھا جا سکتا ہے
اسرائیل کے ساتھ معاملہ کرنے والے سابق تاجر عامر الفاخوری کی رہائی کے معاملہ کی وجہ سے لبنان کی فوجی عدالت کے سربراہ بریگیڈیئر حسین العبد اللہ کا تختہ پلٹ گیا ہے جبکہ لبنان نے پہلی بار باضابطہ طور پر پیش قدمی کی ہے لیکن شرمندہ بھی ہوا ہے اور ان سب کے باوجود بیروت میں امریکی سفیر کو بلایا اور عدالتی پابندی کے باوجود لبنان سے ان کی روانگی کی وجوہات کے بارے میں سوال وجواب کیا۔
وقت گزرنے کی وجہ سے اسرائیل کے ساتھ معاملات کرنے اور لبنانی قیدیوں کو سزا دینے کے الزامات کو الفاخوری سے ختم کرنے کا فیصلہ کرنے والے بریگیڈیئر العبد اللہ نے اپنے اس عہدہ سے دستبردار ہونے کا اقدام کیا ہے جس سے وہ اگلے موسم گرما میں برلن میں لبنانی سفارتخانے میں فوجی اتاشی کے طور پر کام کرنے کے لئے چھوڑنے والے تھے اور انہوں نے یہ اقدام الفاخوری کے سلسلہ میں اپنی طرف سے ہونے والے فیصلہ پر شدید تنقید کئے جانے کی وجہ سے ہوا ہے اور ان کے اس فیصلہ ہی کی وجہ سے انہیں گزشتہ ستمبر کو امریکہ سے لبنان میں داخل ہونے پر گرفتار کر لیا گیا تھا پھر اس کے دوسرے ہی دن انہیں ایک فوجی ہیلی کاپٹر کے ذریعہ لبنان سے لے جایا گیا تھا۔(۔۔۔)
ہفتہ 26 رجب المرجب 1441 ہجرى - 21 مارچ 2020ء شماره نمبر [15089]

انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا