ڈنمار کی طرف سے "ایرانی قتل کے منصوبوں" کی فائل منتقل

ڈنمار کی طرف سے "ایرانی قتل کے منصوبوں" کی فائل منتقل

جمعرات, 26 March, 2020 - 12:15
28 ستمبر 2018 کو کوپن ہیگن کے قریب پل پر سیکیورٹی آپریشن کے دوران ڈنمارک پولیس کی کاروں کو دیکھا جا سکتا ہے (اے پی اے)
ڈنمارک کی عدلیہ نے ڈینش سرزمین پر "ایرانی قتل کے منصوبوں" کی فائل منتقل کردی ہے کیونکہ اس ملک کے سرکاری وکیل نے گزشتہ روز ایرانی نژاد ایک ناروے کے شہری پر الزام لگایا ہے کہ اس نے ایرانی انٹلیجنس منصوبے میں مدد فراہم کی ہے اور اس منصوبہ میں کم از کم 3 افراد کے قتل کی کوششیں شامل ہیں۔
حکام نے اس شخص کو اکتوبر 2018 میں ایران کے حزب اختلاف کی 3 شخصیات کے قتل کے منصوبے میں اس کے روابط ہونے کے شبہ میں گرفتار کیا ہے اور خبر رساں ادارہ رائٹرز نے ڈینش پراسیکیوٹر کے حوالے سے ایک بیان میں ان کی بات کو نقل کیا ہے کہ اس شخص پر اب یہ الزام لگایا گیا ہے کہ اس نے ایرانی انٹیلیجنس سروس کے لئے معلومات کر اکٹھا کرکے انہیں دیا ہے تاکہ وہ ڈنمارک میں اس قتل کو انجام دینے کے لئے استعمال کریں اور اس کے علاوہ اس پر قتل کرنے کی کوشش کا بھی الزام لگایا گیا ہے۔(۔۔۔)
جمعرات 01 شعبان المعظم 1441 ہجرى - 26 مارچ 2020ء شماره نمبر [15094]

انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا