الزرفی گر پڑے اور الکاظمی منظر عام پر آگئے

الزرفی گر پڑے اور الکاظمی منظر عام پر آگئے

ہفتہ, 4 April, 2020 - 12:00
گزشتہ روز ایک عراقی کو نجف سے 20 کلو میٹر دور قبرستان میں کرونا وائرس کے شکار ایک شخص کی قبر پر خوشبو چھڑکتے ہوئے دیکھا جا سکتا ہے (اے ایف پی)
نامزد عراقی وزیر اعظم عدنان الزرفی ایک آئینی رکاوٹ سے ٹکرا گئے جس کی وجہ سے انٹیلیجنس ڈائریکٹر مصطفی الکاظمی کو متبادل کی امیدوار کے طور پر سامنے آنا پڑآ کیونکہ زرفی حکومت بنانے کے سلسلہ میں ناکام ہوئے اور اس کی وجہ سے یہ ہے کہ وہ شیعہ جماعتوں کے ںزدیک مقبول نہیں ہوئے اور خاص طور پر ہادی العامری کی قیادت میں "الفتح" بلاک نے تو انہیں مسترد ہی کردیا ہے۔
جس نئی پیشرفت نے الزرفی کے منصب سے انکار کرنے والوں کو تقویت بخشی وہ صدر جمہوریہ برہم صالح کی طرف سے ایک ریٹائرڈ جج محمد رجب الکوبیسی کو وفاقی عدالت کا ممبر متعین کرنے سے اپنے آپ کو پیچھے ہٹانا ہے  اور "الفتح" اتحاد نے وفاقی عدالت سے پوچھنے کے سلسلہ میں صدر جمہوریہ کا اعتراض کیا تھا اور یہ زرفی کو ذمہ دار بنانے سے ایک دن پہلے وا ہے کہ کیا وہ جس کو چاہیں ذمہ دار بنا سکتے ہیں۔(۔۔۔)
ہفتہ 11 شعبان المعظم 1441 ہجرى - 04 اپریل 2020ء شماره نمبر [15103]

انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا