سینڈرز کے انخلا کی وجہ سے وائٹ ہاؤس کی دوڑ میں بائیڈن کا راستہ ہموار

سینڈرز کے انخلا کی وجہ سے وائٹ ہاؤس کی دوڑ میں بائیڈن کا راستہ ہموار

جمعرات, 9 April, 2020 - 14:30
کل ووٹ دیتے وقت ویسکنسن کے ایک ووٹر کو کیمیکل حفاظتی ماسک پہنے ہوئۓ دیکھا جا سکتا ہے (اے پی)
سینیٹر برنی سینڈرز نے اگلے نومبر میں ہونے والے صدارتی انتخابات میں موجودہ ریپبلکن صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے ساتھ بڑے محاذ آرائی میں داخل ہونے کے لئے ریاستہائے متحدہ کے صدارتی دوڑ سے اپنی دستبرداری کا اعلان کیا ہے اور یہ ایسا اقدام ہے جس کی وجہ سے ریپبلکن سے تعلق رکھنے والے ان کے مقابل اور سابق نائب صدر کا راستہ صاف ہو گیا ہے۔
سینڈرز کا یہ فیصلہ اس وقت آیا جب ان کو ویسکنسن انتخابات کے ابتدائی نتائج کی اطلاع ملی جس میں بائیڈن کو ان کے مقابلہ میں کافی برتری حاصل ہوئی ہے۔
ویسکنسن صوبہ میں ابتدائی انتخابات پرسو ہوئے ہیں اور پولنگ اسٹیشنوں کے سامنے امریکیوں کی لمبی لمبی قطاریں دیکھنے کو بھی ملی ہیں اور یہ وہ مناظر تھے جو طبی شعبے کے ماہرین کے انتباہ کے بالکل برخلاف تھے۔(۔۔۔)
جمعرات 16 شعبان المعظم 1441 ہجرى - 09 اپریل 2020ء شماره نمبر [15108]

انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا