داود اوغلو کو عام معافی میں فاسدین کے شامل ہونے کا خدشہ

داود اوغلو کو عام معافی میں فاسدین کے شامل ہونے کا خدشہ

ہفتہ, 11 April, 2020 - 10:15
ترک صدر رجب طیب اردوغان کو دیکھا جا سکتا ہے (رائٹرز)
مستقبل نامی حزب اختلاف کی ترک پارٹی کے سربراہ سابق وزیر اعظم اور ترک صدر اردوغان کے سابق اتحادی احمد داود اوغلو نے حکمران جسٹس اینڈ ڈویلپمنٹ پارٹی کی درخواست پر ترک پارلیمنٹ کے ذریعہ زیر بحث "عام معافی" بل کے مسودے کو تنقید کا نشانہ بنایا ہے کیونکہ انہوں نے سیاسی قیدیوں کو اس معافی سے مستثنی کیا ہے یا ان کو شرط کے ساتھ نکالا جائے گا۔
احمد داود اوغلو نے زور دے کر کہا ہے کہ اس معافی کا مسودہ جسے "نئے کورونا وائرس" کے پھیلاؤ سے نمٹنے کے اقدام کے طور پر تجویز کیا گیا ہے یہ خفیہ معافی کے قائم مقام ہے اور اسم عافی سے رشوت لینے والے، دیگر گروہ اور بدعنوانی کے جرائم میں ملوث افراد فائدہ اٹھائیں گے جبکہ سیاسی مخالفین اور رائے کے قیدیوں کو اس سے خارج کیا جائے گا۔(۔۔۔)
ہفتہ 18 شعبان المعظم 1441 ہجرى - 11 اپریل 2020ء شماره نمبر [15110]

انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا