سیناء میں امن فوجیوں کو کم کرنے کے امریکی رجحان کے بارے میں اسرائیلی خدشات

سیناء میں امن فوجیوں کو کم کرنے کے امریکی رجحان کے بارے میں اسرائیلی خدشات

ہفتہ, 9 May, 2020 - 12:45
گزشتہ روز نابلس میں ایک فلسطینی کو اپنی چھوٹے ورکشاپ کے سامنے بیٹھے نماز ادا کرتے ہوئے دیکھا جا سکتا ہے (اے پی اے)
اسرائیل نے گزشتہ روز اعلان کیا ہے کہ وہ امریکہ کے ساتھ اس پریس رپورٹ کے سلسلہ میں بات چیت کرے گا جس میں مصری علاقہ جزیرہ نما سینا میں واشنگٹن کی زیرقیادت امن افواج کو کم کرنے کے امکان کے بارے میں بات کی گئی ہے اور ان فورسز کی موجودگی کے بارے میں کہا ہے جو تقریبا چار دہائیوں سے موجود ہے کہ ان کا وجود بہت اہم ہے۔

گزشتہ روز وال اسٹریٹ جرنل نے موجودہ اور سابق امریکی عہدے داروں کے حوالے سے بتایا ہے کہ سیکریٹری دفاع مارک ایسبر جزیرہ نما سینا میں بین الاقوامی امن فوج میں حصہ لینے والی کچھ امریکی افواج کو واپس بلانا چاہتے ہیں۔

 
اس رپورٹ پر تبصرہ کرنے کی درخواست کے جواب میں اسرائیلی وزیر توانائی یوول اسٹینز نے تل ابیب میں ریڈیو 102 ایف ایم کو انٹرویو دیتے ہوئے کہا ہے کہ سینا میں بین الاقوامی قوتیں اہم ہیں اور امریکی شرکت بھی اہم ہے۔(۔۔۔)


ہفتہ 16 رمضان المبارک 1441 ہجرى - 09 مئی 2020ء شماره نمبر [15138]


انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا