مغرب میں ایران اور حزب اللہ کے سلیپر سیل کی طرف سے انتباہ

مغرب میں ایران اور حزب اللہ کے سلیپر سیل کی طرف سے انتباہ

اتوار, 17 May, 2020 - 16:15
1994 میں بیونس آئرس میں ٹرک بم کے پھٹنے کے بعد یہودی ایسوسی ایشن کے صدر دفتر کی محفوظ شدہ دستاویزات کی تصویر کو دیکھا جا سکتا ہے (رائٹرز)
بہت سے شواہد موجود ہیں کہ ایران اور لبنانی "حزب اللہ" "سلیپر سیل" کا ایک ایسا نیٹ ورک قائم کرنے میں کامیاب رہے ہیں جو انھیں امریکہ اور مغربی یورپ میں کمانڈ کرے گا اور دہشت گردوں کے حملوں کے لئے متحرک بھی ہو سکتا ہے۔

یہ ثبوت ایون پاپ اور مچل سیبلر کے ذریعہ "ایران کی آپریشنل تیاری اور مغرب میں (حزب اللہ)" کے عنوان سے ایک رسالے میں شائع ہوئے ہیں جو تنازعات اور دہشت گردی کے مطالعے کے لئے خاص ہیں۔


دونوں محققین نے لکھا ہے کہ اس سال کے آغاز میں اس وقت بغداد ایئر پورٹ کے قریب امریکی ہڑتال میں ایرانی "قدس فورس" کے کمانڈر قاسم سلیمانی کی ہلاکت کے بعد امریکہ اور ایران کے مابین کشیدگی بڑھ گئی ہے اور انھیں پتا چلا ہے کہ اس سلسلہ میں شواہد بھی مل رہے ہیں کہ حالیہ برسوں میں ایران اور (حزب اللہ) نے ایک نیٹ ورک قائم کرنے کی کوشش کی ہے جو ریاستہائے متحدہ اور مغربی یورپ میں موجود ہے جسے انتقامی حملے کے ایک حصے کے طور پر حملوں کا آغاز کرنے کے لئے اس کا استعمال کیا جاسکتا ہے۔(۔۔۔)


اتوار 24 رمضان المبارک 1441 ہجرى - 17 مئی 2020ء شماره نمبر [15146]


انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا