ڈونرز نے یمن کو 1.3 بلین ڈالر سے زیادہ کی امداد کا کیا وعدہ

ڈونرز نے یمن کو 1.3 بلین ڈالر سے زیادہ کی امداد کا کیا وعدہ

بدھ, 3 June, 2020 - 12:30
کل ریاض میں سعودی عرب اور اقوام متحدہ کے زیر اہتمام یمن کے لئے "ڈونرز کانفرنس" کے ایک منظر کو دیکھا جا سکتا ہے (ایس پی اے)
اقوام متحدہ کے زیر اہتمام کل ریاض میں منعقد ہونے والی یمن ڈونرز کانفرنس کے نتیجے میں امدادی اور انسانی امداد دینے کا اعلان کیا گیا ہے جو 1.35 بلین ڈالر سے زیادہ ہے۔
 
اس کانفرنس میں 126 سے زیادہ جماعتوں نے شرکت کی ، جو
پہلے سے طے شدہ طور پر ریاض میں منعقد ہونے والی کانفرنس میں 126 اداروں نے شرکت کی ہے جن میں 66 ممالک، 15 بین الاقوامی تنظیمیں، 3 بین الاقوامی سرکاری تنظیمیں اور 39 غیر سرکاری تنظیمیں شامل ہیں اور اس کے علاوہ اسلامی ترقیاتی بینک، ریڈ کراس کی بین الاقوامی کمیٹی اور ریڈ کراس اور انٹرنیشنل فیڈریشن ریڈ کریسنٹ سوسائٹی بھی شامل ہیں۔

سعودی عرب کی طرف سے سب سے نمایاں شراکت 500 ملین ڈالر، ناروے کی طرف سے 195 ملین ڈالر، برطانیہ کی طرف سے 200 ملین ڈالر، سویڈن کی طرف سے 30 ملین ڈالر، جاپان کی طرف سے 41 ملین ڈالر یمین کے امدادی اداروں کو دئے گئے ہیں اور کورونا وائرس سے نمٹنے کے لئے 7.3 ملین ڈالر دئے گئے ہیں اور جنوبی کوریا نے 18.4 ملین ،ڈالر اور کینیڈا نے 40 ملین ڈالر کی امداد فراہم کی ہے جبکہ یوروپی کمیشن نے 80 ملین ڈالر اور نیدرلینڈز نے 16.7 ملین ڈالر فراہم کیا ہے۔(۔۔۔)


بدھ 11 شوال المکرم 1441 ہجرى - 03 جون 2020ء شماره نمبر [15163]


انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا