ٹرمپ نے بین الاقوامی فوجداری عدالت کو سزا دینے کو جائز قرار دیا

ٹرمپ نے بین الاقوامی فوجداری عدالت کو سزا دینے کو جائز قرار دیا

جمعہ, 12 June, 2020 - 14:45
امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے ایک ایگزیکٹو آرڈر جاری کیا ہے جس میں انہوں نے بین الاقوامی فوجداری عدالت کے خلاف اس وقت پابندیاں عائد کرنے کو جائز قرار دیا ہے جب وہ کسی بھی امریکی شہری کے خلاف قانونی کارروائی شروع کردے اور یہ اقدام امریکی افواج کے عناصر کی پیروی کرنے اور ان کے جنگی جرائم کے سلسلہ میں بیان کردہ کاموں کے امکانات کی تحقیقات کرنے کے فیصلے کے بعد سامنے آیا ہے۔

وزیر خارجہ مائک پومپیو، وزیر دفاع مارک ایسپر، وزیر عدل ولیم بار اور قومی سلامتی کے مشیر رابرٹ اوبرائن نے مشترکہ پریس کانفرنس کرکے اعلان کیا ہے کہ امریکی انتظامیہ کسی بھی امریکی فوجی یا شہری کو اس کے سامنے لانے کی اجازت نہیں دے گی کیونکہ امریکہ بین الاقوامی فوجداری عدالت پر بدعنوانی کا الزام عائد کرتے ہوئے اس کے اختیار کو تسلیم نہیں کرتا ہے اور اس کی وجہ یہ ہے کہ اس نے وہ جرم کیا ہے اور اب تک کر رہی جس کا تعلق انصاف سے نہیں ہے چاہے وہ امریکیوں کے لئے ہوں یا امریکہ کے اتحادیوں کے لئے ہوں۔(۔۔۔)


جمعہ 20 شوال المکرم 1441 ہجرى - 12 جون 2020ء شماره نمبر [15172]


انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا