"قیصر کے قانون" کی وجہ سےاسد کی تنہائی میں اضافہ اور ان کے اتحادیوں پر دباؤ

"قیصر کے قانون" کی وجہ سےاسد کی تنہائی میں اضافہ اور ان کے اتحادیوں پر دباؤ

واشنگٹن: ایلی یوسف اور رانا ابٹر۔ نیو یارک: علی بردى۔ ماسکو: رائد جبر
بدھ, 17 June, 2020 - 10:30
گزشتہ روز ترکی کی سرحد کے قریب واقع اطمہ کیمپ میں کھاتے ہوئے بے گھر شامی شہریوں کو دیکھا جا سکتا ہے (رائٹرز)
شام میں شہریوں کو تحفظ دینے کے لئے "قیصر کے قانون" کے نام سے مشہور امریکی قانون کا نفاذ آج  سے شروع ہوا ہے اور اسی قانون کی وجہ سے شامی صدر بشار الاسد کی تنہائی اور ان کے اتحادی روس اور ایران پر ہونے والے دباؤ میں اضافہ ہوا ہے۔

گزشتہ سال کے آخر میں امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے دستخط شدہ قانون کے آغاز کا اعلان کرنے کے لئے آج واشنگٹن میں متعدد تقریبات ہونے والے ہیں اور اس "قیصر کے قانون" کی وجہ سے ٹرمپ کو کسی بھی اس فرد یا پارٹی کے اثاثے کو منجمد کرنے کا اختیار مل جائے گا جو شام کے ساتھ معاملہ کرے گا  خواہ اس کا تعلق کسی بھی ملک سے ہو اور اسی طرح تعزیراتی قانون پہلی بار شام میں روسی اور ایرانی اداروں کے ساتھ معاہدہ کرنے والوں کو بھی نشانہ بنائے گا۔(۔۔۔)



 بدھ 25 شوال المکرم 1441 ہجرى - 17 جون 2020ء شماره نمبر [15178]


انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا