لبنان کے سابق وزرائے اعظم نے بعبدا کی ملاقات کا کیا بائیکاٹ

لبنان کے سابق وزرائے اعظم نے بعبدا کی ملاقات کا کیا بائیکاٹ

منگل, 23 June, 2020 - 11:45
گزشتہ روز بیروت میں ملاقات کے دوران حریری، میقاتی، سنيورة اور سلام کو دیکھا جا سکتا ہے (دالاتي ونهرا)
لبنان کے سابق وزرائے اعظم فؤاد سنيورة، تمام سلام، سعد حريري اور نجيب ميقاتی نے جمعرات کو لبنان کے صدر مائکل عون کے ذریعہ طلب کیے گئے قومی اجلاس میں شرکت نہ کرنے پر معذرت کا اعلان کیا ہے اور اس طرح کے اجلاس کو وقت کا ضیاع قرار دیا ہے۔

اجلاس میں شرکت کرنے کے فیصلہ پر تبادلۂ خیال کرنے کے لئے وقف کردہ اجلاس کے بعد ان کے سامنے ایک بیان میں انہوں نے اعلان کیا کہ وہ افق کے بغیر کسی اجلاس میں شرکت کرنے کے لئے تیار نہیں ہیں اور یہ بھی کہا کہ اس کی دعوت اور اس کا واضح مقصد غلط جگہ پر ظاہر ہوا ہے اور اس کی دعوت دینے والے اور مدعو ہونے والے دونوں کے وقت کی بربادی ہے اور سنیورہ نے کہا کہ ان کا یہ فیصلہ لبنان کو اس مکمل تباہی وبربادی سے بچانے کے لئے حل تلاش کرنے میں حکومت کی عدم صلاحیت پر واضح اعتراض ہے جس سے خاص طور پر متوسط ​​طبقے متاثر ہیں اور انہوں نے اس بات پر بھی زور دیا کہ حکومت نے پچھلے مہینوں میں بجلی کے منصوبے ، تقرریوں اور تبادلے کی شرحوں کے تحت سلاتہ پلانٹ کے ذریعہ جو کارکردگی پیش کی ہے ان سے چیلنجوں کی سطح پر ملک میں ایک نمایاں خسارہ کی طرف اشارہ مل رہا ہے۔(۔۔۔)


منگل 02 ذی القعدہ 1441 ہجرى - 23 جون 2020ء شماره نمبر [15183]


انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا