امریکہ کے اندر کورونا میں غیر معمولی اضافہ اور چین پر الزام

امریکہ کے اندر کورونا میں غیر معمولی اضافہ اور چین پر الزام

جمعہ, 26 June, 2020 - 11:45
ٹیکساس میں بدھ کے دن سان انتونیو اسٹریٹ میں سیاحوں کو دیکھا جا سکتا ہے (اے پی)
امریکی ریاستوں میں "کوویڈ ۔19" کے کیسوں میں ایک بار پھر اضافہ ہونے کا مشاہدہ کیا جا رہا ہے اور اسی کی وجہ سے 24 گھنٹوں میں 36 ہزار سے زیادہ مقدمات درج کئے جانے کے بعد  وہاں کے ذمہ دار معیشت کو دوبارہ کھولنے کے اقدامات کو ملتوی کرنے پر مجبور ہوئے ہیں۔
 
اسی سلسلہ میں واشنگٹن نے اس وبا کو چھپاتے ہوئے چین پر دوبارہ اپنے الزامات لگائے ہیں جس نے دنیا بھر میں ساڑھے نو ملین سے زیادہ افراد کو متاثر کیا ہے اور امریکی وزیر خارجہ مائیک پومپیو نے یورپی یونین کے ممالک کو جمع کرنے والی ایک ورچوئل کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا ہے چین کی کمیونسٹ پارٹی کی طرف سے درپیش چیلنجوں کا ازالہ کرنا لازمی ہے اور  انہوں نے اس بات کی طرف بھی اشارہ کیا  ہے کہ چین کی حکمران جماعت نے ووہان شہر میں گزشتہ سال دسمبر کے ماہ میں پہلی بار سامنے آنے کے بعد سے کورونا وائرس کے پھیلاؤ کو پوشیدہ رکھا ہے۔
اسی سلسلہ میں ورلڈ ہیلتھ آرگنائزیشن کے ڈائریکٹر جنرل ٹیڈروس اذانم گبریوس نے کہا ہے کہ یہ وبا عالمی سطح پر پھیل رہی ہے اور یہ یقینی نہیں ہے کہ سائنسدان اس "کورونا" وائرس کی ایک موثر ویکسین تک پہنچ سکیں۔(۔۔۔)

جمعہ 05 ذی القعدہ 1441 ہجرى - 26 جون 2020ء شماره نمبر [15186]


انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا