ٹرمپ انتظامیہ نے اسرائیل کو ضم کے لئے سبز روشنی دینے کے فیصلے کو ملتوی کیا

ٹرمپ انتظامیہ نے اسرائیل کو ضم کے لئے سبز روشنی دینے کے فیصلے کو ملتوی کیا

جمعہ, 26 June, 2020 - 15:45
اسرائیلی مظاہرین کو ضم کرنے کے خلاف نیتن یاہو اور گینٹز کی بوتلیں وسطی تل ابیب میں لٹکائے ہوئے دیکھا جا سکتا ہے (اے ایف پی)
واشنگٹن: ہبہ القدسی۔ پیرس: مائکل ابو نجم
واشنگٹن نے وائٹ ہاؤس میں تین روز تک جاری اجلاسوں کے باوجود مغربی کنارے کے حصوں کو ضم کرنے کے سلسلہ میں اسرائیل کے منصوبوں سے متعلق اپنے موقف کو حل نہیں کر سکا ہے۔

صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے معاونین کے ذریعہ ہونے والی میٹنگیں اس فیصلے تک پہنچنے کے ارادہ کے ساتھ کہ کیا واشنگٹن اسرائیل کو ضم کرنے کے لئے گرین سگنل عطا کرے گا کوئی حتمی فیصلہ کیے بغیر کل اختتام پذیر ہو گئیں ہیں۔


وائٹ ہاؤس کے ایک سینئر عہدہ دار نے "الشرق الاوسط" کے ساتھ گفتگو کرتے ہوئے بتایا ہے کہ اس ہفتے وائٹ ہاؤس کی میزبانی میں ہونے والی میٹنگیں نتیجہ خیز رہی ہیں اور امریکی سفیر ڈیوڈ فریڈمین کل جمعرات کی شام خصوصی ایلچی ایوی برکویٹز اور میٹنگ کمیٹی کے ایک رکن سکاٹ لایتھ کے ہمراہ اسرائیل واپس آئیں گے تاکہ مزید ملاقاتیں اور مزید تجزیہ کیا جا سکے اور انہوں نے مزید کہا کہ ٹرمپ منصوبے پر عمل درآمد کے اگلے اقدامات کے بارے میں ابھی کوئی حتمی فیصلہ نہیں ہوا ہے۔(۔۔۔)


جمعہ 05 ذی القعدہ 1441 ہجرى - 26 جون 2020ء شماره نمبر [15186]


انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا