ایران کے ذریعہ دھماکہ کا سبب پوشیدہ رکھنے کی کوشش اور اس کا جواب دینے کی دھمکی

ایران کے ذریعہ دھماکہ کا سبب پوشیدہ رکھنے کی کوشش اور اس کا جواب دینے کی دھمکی

ہفتہ, 4 July, 2020 - 13:30
ایرانی سلامتی وزیر کو دو سال قبل نتنز نامی جوہری مرکز کا دورہ کرتے ہوئے دیکھا جا سکتا ہے (ارنا)
ایران نے گزشتہ روز اعلان کیا ہے کہ اس نے اس حادثہ کا سبب معلوم کر لیا ہے جس کی وجہ سے دو روز قبل نتنز جوہری مرکز کی ایک عمارت میں دھماکہ ہوا ہے لیکن اس نے یہ بھی کہا ہے کہ وہ حفاظتی تحفظات کے مناسب وقت پر اس کا اعلان کرے گا۔

اگرچہ ایرانی عہدے داروں نے اشارہ کیا ہے کہ یہ دھماکہ سائبر حملے کی وجہ سے ہوا ہے اور اس نے اس کا جواب دینے کا عزم بھی ظاہر کیا ہے اور نیو یارک ٹائمز نے مشرق وسطی کے انٹیلیجنس اہلکار کے حوالے سے بتایا ہے کہ دھماکہ اس مرکز کے اندر نصب ایک دھماکہ خیز مادہ کے نتیجے میں ہوا ہے اور اس میں یہ بھی بتایا گیا کہ اس مادہ کی وجہ سے اس مرکز کے بیشتر حصے تباہ ہو گئے چونکہ عمل میں آنے سے پہلے نئے سینٹر فیوج مستحکم ہوجاتے ہیں۔


سپریم کونسل برائے قومی سلامتی کے ترجمان کیان کھسراوی نے کہا ہے کہ متعلقہ اداروں کی زیر صدارت تحقیقات نے نتنز جوہری کمپلیکس میں حادثہ کی وجوہ کا درست تعین کیا ہے ... سیکیورٹی وجوہات کی بناء پر حادثہ کی وجہ اور طریق کار کا بروقت اعلان کیا جائے گا۔(۔۔۔)


ہفتہ 13 ذی القعدہ 1441 ہجرى - 04 جولائی 2020ء شماره نمبر [15194]


انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا