چین کی طرف سے امریکی فراہمی پر حملہ

چین کی طرف سے امریکی فراہمی پر حملہ

منگل, 7 July, 2020 - 12:15
امریکی طیارہ بردار بحری جہاز نمٹز کو بحیرہ جنوبی چین میں موجودہ فوجی مشقوں میں حصہ لیتے ہوئے دیکھا جا سکتا ہے (اے پی)
بیجنگ نے واشنگٹن کے ساتھ اپنی بیان بازی میں تیزی لائی ہے اور اس پر یہ الزام عائد کیا ہے کہ وہ بحیرہ جنوبی چین میں دو ہوائی جہاز بردار جہازوں کی تعیناتی کرکے اپنی قوت دکھانا چاہتا ہے اور اسی کے ساتھ حال ہی میں سرحدی محاذ آرائی کا واقعہ دیکھنے میں آیا تھا جس میں درجنوں فوجی ہلاک ہوئے ہیں اور اس نے ہمالیہ کے علاقہ سے اپنی فوج کو واپس بلا لیا ہے۔

چین نے گزشتہ روز امریکہ پر الزام لگایا ہے کہ وہ فوجی جنگی جہازوں کے لئے جان بوجھ کر اپنا بحری جہاز بحیرہ جنوبی چین کے لئے بھیج رہا ہے اور برونائی، ملیشیاء، فلپائن اور تائیوان کے ساتھ متنازعہ علاقے میں بازی لگانے کی کوشش کر رہا ہے اور پینٹاگون نے اس وقت کہا تھا جب اس نے طیارہ بردار بحری جہاز کو تربیت دینے کا اعلان کیا تھا کہ وہ تمام ممالک کے اڑان، جہاز چلانے اور جہاں بھی بین الاقوامی قانون کی اجازت ہے وہاں کام کرنے کے حق کے دفاع کا مطالبہ کرنا چاہتا ہے۔(۔۔۔)


منگل 16 ذی القعدہ 1441 ہجرى - 07 جولائی 2020ء شماره نمبر [15197]


انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا