محمد صبحي: میں معاہدہ کی جمہوریت اور عمل آوری کی آمریت پر عمل پیرا ہوں

محمد صبحي: میں معاہدہ کی جمہوریت اور عمل آوری کی آمریت پر عمل پیرا ہوں

اتوار, 30 August, 2020 - 15:30
سن 1970 میں انسٹی ٹیوٹ آف تھیٹریکل آرٹس سے گریجویشن ہونے کے بعد گزشتہ پچاس سالوں کے دوران مصری عظیم مصور محمد صبحي ایک اداکار، مصنف اور ہدایت کار کی حیثیت سے اپنی صلاحیتوں کو پیش کرنے میں کامیاب رہے ہیں اور انہوں نے تقریبا 42 ڈرامے پیش کیے اور دلچسپ اور معنی خیز ٹیلیویزن شو بھی پیش کئے ہیں۔

صبحي اسٹیج پر اپنے سفر کو بہت اطمینان کے ساتھ دیکھتے ہیں کیوںکہ وہ شروع سے ہی اپنے پیش کردہ معاملات میں فرق پیدا کرنا چاہتے تھے اور اس کے لئے ایک آئین قائم کیا جس سے روگردانی کبھی نہیں کی ہے۔


الشرق الاوسط کو انٹرویو دیتے ہوئے انہوں نے کہا کہ فن ایک نظم وضبط کا نام ہے اور جب میں معاہدے کی جمہوریت پر عمل پیرا ہوں تو میں اس پر عمل درآمد کی آمریت کی بھی پیروی کرتا ہوں اور انہوں نے کہا کہ وہ اپنے کچھ شوز میں اداکاری،  تحریری اور ہدایتکاری کا امتزاج کیا ہے جس سے ان پر بہت زیادہ بوجھ اور ذمہ داری کا پتہ چلتا ہے۔(۔۔۔)


اتوار 11 محرم الحرام 1442 ہجرى - 30 اگست 2020ء شماره نمبر [15251]


انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا