سعودی عرب میں جزیرۂ عرب میں انسانوں کے قدیم ترین نشانات کا انکشاف

سعودی عرب میں جزیرۂ عرب میں انسانوں کے قدیم ترین نشانات کا انکشاف

جمعرات, 17 September, 2020 - 11:15
شمالی سعودی عرب کے علاقے تبوک میں آثار قدیمہ کی دریافت ہونے کے منظر کو دیکھا جا سکتا ہے
سعودی عرب نے گزشتہ روز ملک کے شمال میں انسانی موجودگی کے آثار کے انکشاف کا اعلان کیا ہے اور یہ جزیرۃ العرب میں قدیم ترین آثار میں سے ہے۔

وزارت ثقافت کی ورثہ اتھارٹی نے ایک پریس کانفرنس میں کہا ہے کہ سعودی عرب اور بین الاقوامی مشترکہ ٹیم کو تبوک کے علاقے (شمال مغرب) کے مضافات میں ایک قدیم خشک جھیل کے ارد گرد انسانی، ہاتھی اور شکاری جانوروں کے پاؤں کے نشانات دریافت ہوئے ہیں جن کی تاریخ 120،000 سال سے زیادہ پرانی ہے۔


اتھارٹی نے مزید کہا کہ سروے کے نتائج سے بکری اور مویشیوں کے گھر والے 7 افراد ، 107 اونٹ، 43 ہاتھی اور دوسرے جانوروں کے نقشوں کی نشاندہی کی گئی ہے اور ان کے علاوہ  233 جیواشم ملے ہیں جو ہاتھیوں اور اوریکس کے ہیں۔(۔۔۔)


جمعرات 29 محرم الحرام 1442 ہجرى - 17 ستمبر 2020ء شماره نمبر [15269]


انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا