پاکستان: 264 افراد کے ہلاک ہونے کا سبب بننے والے دو افراد کو پھانسی دی گئی

پاکستان: 264 افراد کے ہلاک ہونے کا سبب بننے والے دو افراد کو پھانسی دی گئی

منگل, 22 September, 2020 - 17:30
جس فیکٹری میں آگ لگی ہے اس کے باہر ایک شخص کو پیدل چلتے ہوئے دیکھا جا سکتا ہے (ہی بی اے)
جنوبی پاکستان کے شہر کراچی میں 2012 میں ملبوسات کی ایک ایسی فیکٹری میں آتش زنی کے الزام میں دو افراد کو آج منگل کے دن موت کی سزا سنائی گئی ہے جس میں 260 افراد ہلاک ہوئے تھے اور عدالت کے مطابق ان دونوں ملزمان نے 11 ستمبر 2012 کو علی انٹرپرائزز فیکٹری میں آگ لگادی تھی کیونکہ اس کے مالکان نے رشوت دینے سے انکار کر دیا تھا۔

پاکستان کے سب سے بڑے اس شہر کراچی میں انسداد دہشت گردی عدالت کے فیصلے کے مطابق ان دونوں افراد کو پھانسی دی جائے گی جہاں 20 ملین سے زائد افراد آباد ہیں اور پبلک پراسیکیوٹر ساجد محمود شیخ نے فرانسیسی خبر رساں ایجنسی کو بتایا ہے کہ عدالت نے 264 لوگوں کو قتل کرنے کے الزام میں انہیں سزائے موت سنائی ہے اور یہ بھی کہا ہے کہ یہ سزاء انتہائی مناسب ہیں۔(۔۔۔)


منگل 05 صفر المظفر 1442 ہجرى - 22 ستمبر 2020ء شماره نمبر [15274]


انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا