سوڈان نے امریکی دہشت گردی کی فہرست سے ہٹائے جانے کو اسرائیل کے ساتھ تعلقات کے بنانے سے کیا انکار

سوڈان نے امریکی دہشت گردی کی فہرست سے ہٹائے جانے کو اسرائیل کے ساتھ تعلقات کے بنانے سے کیا انکار

اتوار, 27 September, 2020 - 12:15
گزشتہ روز خرطوم میں معاشی کانفرنس کے افتتاح کے موقع پر خودمختاری کونسل کے چیئرمین عبد الفتاح البرہان (دائیں) اور وزیر اعظم عبد اللہ حمدوک کو دیکھا جا سکتا ہے (اے ایف پی)
"رائٹرز" کے مطابق گزشتہ روز سوڈانی موقف اس طرح سامنے آیا ہے کہ اس میں اسرائیل کے ساتھ تعلقات کو معمول پر لانے کے معاملہ کو دہشت گردی کی سرپرستی کرنے والے ممالک کی فہرست سے اپنے کو خارج کئے جانے سے مربوط کرنے کو مسترد کیا ہے اور گزشتہ ماہ خرطوم میں ہونے والی اقتصادی کانفرنس میں وزیر اعظم عبد اللہ حمدوک نے کہا ہے کہ ان کے ملک نے گزشتہ ماہ امریکی وزیر خارجہ مائیک پومپیو سے کہا تھا کہ سوڈان کو دہشت گردی کی فہرست سے نکالنے اور اسرائیل کے ساتھ تعلقات کو معمول پر لانے کے درمیان فرق کرنا ضروری ہے۔

جہاں تک خودمختاری کونسل کے سربراہ عبد الفتاح البرہان کی بات ہے تو انہوں نے کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ سوڈان کو اس فہرست سے نکالنے کے لئے جو موقع ہے اسے غنیمت سمجھنا چاہئے کیونکہ اس فہرست میں ہونے کی وجہ سے اسے حمایت کی رسائی میں رکاوٹ ہو رہی ہے۔(۔۔۔)


اتوار 10 صفر المظفر 1442 ہجرى - 27 ستمبر 2020ء شماره نمبر [15279]


انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا