شام میں اچانک زوال کے سلسلہ میں مغربی تشویش

شام میں اچانک زوال کے سلسلہ میں مغربی تشویش

جمعہ, 6 November, 2020 - 12:00
گزشتہ روز شام کے مشرقی شمال میں واقع الحسكة کے دیہی علاقوں میں ایک روسی ترک گشتی کو دیکھا جا سکتا ہے (اے ایف پی)
مغربی عہدے داروں نے توقع کی ہے کہ شام میں اثر ورسوخ کے تینوں علاقوں کے مابین "رابطہ لائنوں" پر تصادم ہوگا لیکن ان کی سرحدوں میں بنیادی تبدیلی نہیں ہوگی اور انہوں نے داخلی بحرانوں اور مغربی پابندیوں کے جمع ہونے کی وجہ سے سرکاری علاقوں میں اچانک زوال کے خدشے کا اظہار کیا ہے۔

2011 کے آغاز کے بعد سے پہلی بار شام کے تین علاقوں کے درمیان سرحدوں میں کوئی بنیادی تبدیلی نہیں آئی ہے لیکن مغربی عہدے داروں نے اشارہ کیا ہے کہ بیرونی اور مقامی کھلاڑی امریکہ کا اپنے داخلی گھر اور انتخابات میں مشغول ہونے سے فائدہ اٹھائیں گے اور فرات کے مشرق اور ادلب میں حقائق کے سلسلہ میں کام کریں گے اور اس اعتقاد کی بنیاد پر یہ ہے کہ امیدوار جو بائیڈن مختلف میدانوں میں صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے مقابلے میں زیادہ مشکل واقع ہوں گے خاص طور پر شام کے سلسلہ میں تو وہ بہت ہی سخب ہیں۔(۔۔۔)


جمعہ 20 ربیع الاول 1442 ہجرى – 06 نومبر 2020ء شماره نمبر [15319]


انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا