قانونی حکومت نے «صافر» کی اصلاح کرنے میں رکاوٹ ڈالنے والوں کے خلاف پابندیوں کا کیا مطالبہ

قانونی حکومت نے «صافر» کی اصلاح کرنے میں رکاوٹ ڈالنے والوں کے خلاف پابندیوں کا کیا مطالبہ

جمعہ, 13 November, 2020 - 17:30
یمنی حکومت نے ایران کی حمایت یافتہ حوثی ملیشیاؤں پر اقوام متحدہ کے ایلچی مارٹن گریفھیس کی "شترکہ اعلامیہ کے بارے میں کسی حتمی فارمولہ تک پہنچنے کی کوششوں میں رکاوٹ ڈالنے کا الزام عائد کیا ہے اور اس گروپ کو بگڑتی ہوئی انسانی صورتحال کے لئے ذمہ دار بھی قرار دیا ہے اور خستہ حال آئل ٹینکر «صافر» کی اصلاح کرنے کے سلسلہ میں رکاوٹ ڈالنے والے بغاوت کے رہنماؤں کے خلاف پابندیوں کا مطالبہ کیا ہے۔

یہ ایک ایسے وقت میں آیا ہے جب اقوام متحدہ میں واشنگٹن کے مستقل نمائندے کیلی کرافٹ کی ایک تقریر کے مطابق امریکہ نے حوثی گروپ کو ان کے جرائم  کے سلسلہ میں محاسبہ کرنے پر آمادہ کیا ہے۔


کرافٹ نے سلامتی کونسل کے اجلاس کے دوران کہا ہے کہ یمن کے ذریعہ اس کے ہمسایہ ممالک بشمول سعودی عرب کے خلاف ان کے مجرمانہ سلوک کے لئے حوثیوں کو جوابدہ بنانا چاہئے اور ایران اس تشدد کو ہوا دے رہا ہے، فنڈز، اسلحہ اور تربیت مہیا کررہا ہے اور یمن میں تنازعہ کے سیاسی حل کے حصول کے امکان کے سلسلہ میں رکاوٹ پیدا کر رہا ہے۔(۔۔۔)


جمعہ 27 ربیع الاول 1442 ہجرى – 13 نومبر 2020ء شماره نمبر [15326]


انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا