فرانس حکومت کو باسیل کی پابندیوں سے الگ کرنے کے لئے تیار

فرانس حکومت کو باسیل کی پابندیوں سے الگ کرنے کے لئے تیار

اتوار, 15 November, 2020 - 15:45
باخبر سیاسی ذرائع نے «الشرق الاوسط»کو بتایا ہے کہ لبنان میں فرانسیسی صدر کے ایلچی پیٹرک ڈورل لبنان کے صدر مائکل عون کے نقطۂ نظر کی حمایت نہیں کررہے ہیں کیونکہ ان کا خیال ہے کہ رکن پارلیمنٹ جبران باسیل پر عائد امریکی پابندیوں نے حکومت سازی کے کام میں رکاوٹ پیدا کردی ہے اور انہوں نے اس بات کی بھی تصدیق کی ہے کہ ڈورل کی ان کچھ ملاقاتوں کی وجہ سے انہیں بھی اس کا سامنا کرنا پڑ سکتا ہے کیونکہ جن لوگوں سے ان کی ملاقات ہوئی تھی ان میں سے کچھ نے اس مسئلہ کو اٹھایا ہے اور ان کا جواب کہ تھا کہ پیرس کو اس سے کوئی سروکار نہیں ہے اور اس کی فکر صرف حکومت کی تشکیل کو غیرجانبدار بنانا ہے اور اس طرح ان کے درمیان رابطے کا کوئی جواز پیدا نہیں ہو سکتا ہے۔

ذرائع ابلاغ کے مطابق حکومت کی تشکیل اب ایک ایسے مرحلے میں داخل ہورہی ہے جس کے بارے میں سمجھا جارہا ہے کہ یہ مرحلہ مشاورت کی تقدیر کا تعین کرنے کے سلسلہ میں فیصلہ کن ہوگا حالانکہ پیرس نے ان کے وجود سے وابستہ فریقین کو ان کے وعدوں سے متعلق کئی دنوں کی مہلت دی ہے تاکہ وہ اس کے مطابق اس کی تعمیل کرسکیں اور ذرائع کے مطابق انہوں نے یہ بھی کہا  ہے کہ ڈورل نے اپنے ممبروں کی تعداد یا بیگ کے نام اور تقسیم کا ذکر نہیں کیا ہے اور ان سے ملنے والی بیشتر جماعتوں نے تاخیر کا ذمہ دار عون اور باسل کو قرار دیا ہے۔(۔۔۔)


اتوار 29 ربیع الاول 1442 ہجرى – 15 نومبر 2020ء شماره نمبر [15328]


Related News



انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا