ٹرمپ کی نگاہ میں انتخابات کا معاملہ پیچیدہ ہی ہے

ٹرمپ کی نگاہ میں انتخابات کا معاملہ پیچیدہ ہی ہے

منگل, 17 November, 2020 - 14:15
صدر ٹرمپ کو اتوار کے روز ورجینیا میں گولف کے میدان میں دیکھا جا سکتا ہے (رائٹرز)
امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے صدارتی انتخاب کے نتائج کے معاملہ کو معلق رکھا ہے جبکہ انہیں ریپبلیکنز کی طرف سے مطالبات اور دباؤ کا سامنا کرنا پڑا ہے اور یہ صدر منتخب ہونے والے جو بائیڈن کی طرف اقتدار کی منتقلی کے عمل کو شروع کرنے کے مقصد سے کیا گیا ہے جو 65 دن کے بعد وائٹ ہاؤس میں منتقل ہونے کی تیاری کر رہے ہیں۔

ٹرمپ نے منتقلی کے عمل کو مسلسل منع کیا ہے اور انٹیلیجنس رپورٹس اور "کوویڈ ۔19" وبائی امراض کے بارے میں اہم معلومات کو روکنے کی کوشش کی ہے اور اسی طرح ان سرکاری صلاحیتوں تک رسائی حاصل کرنے سے بھی روکا ہے جن کی نگرانی اگلے 20 جنوری کے وسط سے بائیڈن کریں گے اور انہوں نے دوبارہ ٹویٹ کرنے کو ترجیح دیتے ہوئے کہا ہے کہ میں انتخابات میں جیت گیا ہوں اور سرکاری ذرائع نے اس دعوے سے متصادم ہوکر مخالف نتیجے کا اعلان کیا ہے۔


اسی درمیان ٹرمپ کا مقابلہ کرنے کے لئے ریپبلکن پر دباؤ اس وقت بڑھنا شروع ہوگیا جب ٹرمپ نے اپنی فتح کا اعلان کیا اور بائیڈن کو منتقلی کی تیاری میں مدد کرنے سے انکار کیا۔(۔۔۔)



منگل 01 ربیع الثانی 1442 ہجرى – 17 نومبر 2020ء شماره نمبر [15330]


انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا