چینی وزیر خارجہ: عالمی امیدیں سعودی عرب کی زیرقیادت "جی 20 سمٹ" پر منحصر ہیں

چینی وزیر خارجہ: عالمی امیدیں سعودی عرب کی زیرقیادت "جی 20 سمٹ" پر منحصر ہیں

جمعرات, 19 November, 2020 - 12:15
ملک کے مشیر اور چینی وزیر خارجہ وانگ یی این کو دیکھا جا سکتا ہے
ملک کے مشیر اور چینی وزیر خارجہ وانگ یی نے اس بات کی تصدیق کی ہے کہ سعودی عرب کی زیرقیادت "جی 20" سربراہی کانفرنس پر دنیا کی امیدیں لگی ہیں اور انہوں نے اشارہ کیا ہے کہ مملکت کی سربراہی میں اس گروپ نے کورونا وائرس، کلی معاشی پالیسیوں، ترقی پذیر ممالک کے قرضوں سے نمٹنے کے شعبوں میں واضح مثبت نتائج حاصل کیے ہیں اور اسی طرح تجارت، سرمایہ کاری اور ڈیجیٹل معیشت میں بھی اچھا کام کیا ہے۔


الشرق الاوسط کو انٹرویو دیتے ہوئے چینی وزیر نے اپنے ملک کو کورونا وائرس فائل کے بارے میں شفاف نہ ہونے کے الزام کو مسترد کرتے ہوئے اس بات پر زور دیا ہے کہ تحقیق اور ثبوت اس کے برعکس ثابت ہوئے ہیں۔


دوسری طرف وزیر وانگ یی نے اس بات کو مسترد کیا ہے جسے انہوں نے "سرد جنگ کی ذہنیت کے ساتھ امریکی غنڈہ گردی اور صفر گیم (بین الاقوامی تعلقات کا ایک نظریہ) سے تعبیر کیا ہے اور اسی طرح (کورونا) وبائی امراض کی سیاست کو بھی مسترد کیا ہے۔


انہوں نے امید ظاہر کی ہے کہ امریکی فریق عقلیت پسندی کی طرف لوٹ آئے گا اور چین اور دیگر ابھرتی معیشتوں کی ترقی کو معروضی اور منصفانہ انداز میں دیکھے گا۔


چینی وزیر نے یمن میں سیاسی حل پر زور دینے کے لئے "اسٹاک ہوم معاہدے" اور "ریاض معاہدے" پر عمل درآمد کی اہمیت پر زور دیا ہے اور انہوں نے بتایا ہے کہ شام کے مسئلے کے پرامن حل کے لئے ان کے سامنے ایک نیا موقع ہے۔(۔۔۔)


جمعرات 03 ربیع الآخر 1442 ہجرى – 19 نومبر 2020ء شماره نمبر [15332]


انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا