ایرانی جوہری پروگرام کے لئے "بلیک باکس" کا قتل

ایرانی جوہری پروگرام کے لئے "بلیک باکس" کا قتل

ہفتہ, 28 November, 2020 - 11:15
گزشتہ روز محسن فخری زادہ کے قتل کے مقام پر گاڑی کے ٹوٹے ہوئے پرزوں کو دیکھا جا سکتا ہے (اے ایف پی) اور فریم میں ایرانی جوہری سائنسدان کی تصویر بھی دیکھی جا سکتی ہے (ای پی اے)
ایران نے گزشتہ روز تہران کے قریب ایک حملہ میں اپنے اس جوہری سائنسدان محسن فخری زادہ کے قتل کا اعلان کیا ہے جسے ایران کے جوہری ہتھیاروں کے پروگرام کا "بلیک باکس" کہا جاتا ہے اور اس حملہ کے بعد ایران نے فورا ہی اسرائیل پر الزام عائد کیا ہے اور اسے "سخت انتقام" کی دھمکی بھی دی ہے۔

ایرانی وزارت دفاع نے ایک بیان میں کہا ہے کہ اس حملے میں اس کی تحقیقی وترقیاتی تنظیم کے سربراہ محسن فخری زادہ کو نشانہ بنایا گیا ہے جس کی وجہ سے وہ اس طرح زخمی ہوئے زندہ نہ رہ سکے اور اس حملہ کرنے والے کو اس نے دہشت گرد عناصر کے طور پر ذکر کیا ہے اور پاسداران انقلاب کی "تسنیم" اور "فارس" ایجنسیوں نے بتایا ہے کہ قاتلانہ کارروائی تہران کے مشرق میں داموانڈ شہر کے قریب آبسار قصبے میں ہوا ہے۔(۔۔۔)


ہفتہ 13 ربیع الآخر 1442 ہجرى – 28 نومبر 2020ء شماره نمبر [15341]


انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا