کانگریسی حملے کی وجہ سے امریکہ اور اس کی شبیہہ ہوئی خراب

کانگریسی حملے کی وجہ سے امریکہ اور اس کی شبیہہ ہوئی خراب

جمعرات, 7 January, 2021 - 11:30
گزشتہ روز صدر ٹرمپ کے حامیوں کو کانگریس پر حملے کے دوران دیکھا جا سکتا ہے (رائٹرز)
امریکی دار الحکومت میں ایک طرف سیکیورٹی فورسز اور دوسری طرف صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے ان حامیوں کے مابین جھڑپوں کا مشاہدہ کیا گیا ہے جن میں سے سینکڑوں افراد نے کانگریس کی عمارت پر دھاوا بول دیا ہے اور منتخب ہونے والے صدر جو بائیڈن کی فتح کی توثیق کے طریق کار میں رکاوٹ پیدا کرنے کی کوشش کی ہے اور امریکہ کی سیاسی زندگی میں یہ خطرناک اور غیر معمولی پیشرفت خود امریکیوں اور دنیا کے بہت سارے ممالک کے لئے حیرت کا باعث بنی ہے۔

یہ تبدیلیاں سینیٹ میں ریپبلکن اکثریت کے رہنما سینیٹر مچ میک کونل اور سبکدوش ہونے والے صدر کے نائب مائک پینس کی بغاوت کے بعد ہوئی ہیں جنہوں نے بائیڈن کے انتخاب کے لئے توثیقی اجلاس میں نظامت کی ہے اور ان دونوں نے 3 نومبر کے انتخابات کے نتائج کو پلٹ کر ٹرمپ کے مطالبات کو قبول کرنے سے انکار کیا ہے۔(۔۔۔)


جمعرات  24 جمادی الاولی 1442 ہجرى – 07 جنوری 2021ء شماره نمبر [15381]


انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا