عون اور حریری نے ایک دوسرے پر رکاوٹ کے الزامات کئے عائد

عون اور حریری نے ایک دوسرے پر رکاوٹ کے الزامات کئے عائد

ہفتہ, 23 January, 2021 - 15:45
عون اور حریری کو اپنی سابقہ میٹنگوں میں سے ایک میٹنگ کے درمیان دیکھا جا سکتا ہے (قومی ایجنسی)
صدر جمہوریہ اور نامزد وزیر اعظم کے سعد حریری کے مابین لبنانی حکومت کی تشکیل میں رکاوٹ پیدا کرنے کے سلسلہ میں ایک دوسرے پر الزامات عائد کرنے کی وجہ سے کشیدگی میں اضافہ ہو کیا ہے۔

جمہوریہ کے ایوان صدر نے گزشتہ روز ایک بیان جاری کیا ہے جس میں کہا گیا ہے کہ صدر مائکل عون نے حکومت میں تیسرے بلاک کرنے کا مطالبہ نہیں کیا ہے اور اس بات کا اعادہ کیا کہ وہ آزاد پیٹریاٹک موومنٹ کے سربراہ نمائندہ جبران باسیل قیام میں مداخلت نہیں کرتے ہیں اور حزب اللہ بھی عون پر دباؤ نہیں ڈال رہا ہے اور بیان میں یہ بھی کہا گیا ہے کہ عون کو ابھی تک نامزد وزیر اعظم کے ہونے کا انتظار ہے کہ وہ ان کے پاس ایک حکومتی تجویز پیش کرے جو آئین کی دفعات کے مطابق منصفانہ نمائندگی کے معیار کو مدنظر رکھتے ہوئے بنایا گیا ہے۔


حریری کے قریبی ذرائع نے مسلسل تردید کے باوجود حکومت بنانے میں جبران باسل کے معیار کو اپنانے پر بعبدا پیلس کے اصرار کی طرف اشارہ کیا ہے اور انہوں نے کہا ہے کہ متعلقہ افراد کے لئے وزیر اعظم حریری کا پیغام واضح ہے اور وہ تبدیل نہیں ہوا ہے اور وہ آئین کے معیار، قومی مفاد اور فرانسیسی اقدام کے تحت طے کردہ قواعد کے مطابق حکومت ہو۔(۔۔۔)


 


ہفتہ 10 جمادی الآخر 1442 ہجرى – 23 جنوری 2021ء شماره نمبر [15396]

انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا