تیونس میں آئینی بحران کے اشارے

تیونس میں آئینی بحران کے اشارے

جمعرات, 28 January, 2021 - 15:15
پرسو رات نئے وزراء کو اعتماد دینے کے اجلاس کے منظر کو دیکھا جا سکتا ہے (ای پی اے)
منگل کی رات ہشام مشیشی کی حکومت میں 11 نئے وزراء کے سلسلہ میں پارلیمنٹ کی طرف سے منظوری ملنے کے بعد گزشتہ روز تیونس میں آئینی بحران کے اشارے سامنے آئے ہیں اور اس طرح صدر قیس سعید کی طرف سے "وزارتی ترمیم" کو مسترد کرنے اور حلف اٹھانے والے نئے وزرا کو قبول کرنے کی دھمکی دینے کے بعد توجہ قرطاج پیلس کی طرف منتقل ہوگئی۔

گزشتہ روز پارلیمنٹ کے ایوان صدر نے صدر جمہوریہ کو پیغام بھیج کر کہا ہے کہ تمام مجوزہ وزراء کو نائبین کا اعتماد حاصل ہو گیا ہے اور یہ ایک ایسا اقدام ہے جس سے قیس سعید پر دباؤ کی سطح میں اضافہ ہونے کی توقع ہے کیونکہ اس آئینی نقطہ کی وجہ سے تیز سیاسی بحث کا آغاز ہوگا اور ایسے وقت میں جب آئینی قانون کے بیشتر پروفیسرز نے صدر کو نئے وزرا کو قبول کرنے کی ضرورت کی تائید کی ہے اور دوسرے سیاستدانوں نے انتظامی عدلیہ کی طرف جانے کی دھمکی دی ہے۔(۔۔۔)


جمعرات 15 جمادی الآخر 1442 ہجرى – 28 جنوری 2021ء شماره نمبر [15401]


انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا