سعودی ولی عہد شہزادہ نے ریاض حکمت عملی کا کیا آغاز

سعودی ولی عہد شہزادہ نے ریاض حکمت عملی کا کیا آغاز

جمعہ, 29 January, 2021 - 11:30
شہزادہ محمد بن سلمان کو کل ریاض میں مستقبل میں سرمایہ کاری کے اقدام کے اجلاس میں خطاب کرتے ہوئے دیکھا جا سکتا ہے (اے ایف پی)
سعودی عرب کے ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان بن عبد العزیز نے کل ریاض شہر کو ترقی دینے کی اس حکمت عملی کی خصوصیات کا انکشاف کیا ہے جو ملک کے دارالحکومت کو دنیا کے دس بڑے معاشی شہروں میں سے ایک میں تبدیل کرنے میں معاون ثابت ہوگا اور انہوں نے اس بات کی طرف بھی اشارہ کیا ہے کہ یہ منصوبہ ملک میں ذرائع آمدنی کو تنوع اور معیشت کو بڑھانے کے منصوبوں کے ایک حصے کے طور پر سامنے آیا ہے۔

فیوچر انویسٹمنٹ انیشیٹو کے چوتھے سیشن میں شرکت کے دوران ولی عہد شہزادہ نے کہا ہے کہ جلد ہی اعلان کی جانے والی حکمت عملی کا مقصد ریاض کی آبادی کو اس وقت 730 ملین افراد سے 2030 میں 15 سے 20 ملین کے درمیان لانا ہے اور اس بات پر بھی زور دیا ہے کہ عالمی معیشت ممالک پر مبنی نہیں ہے یہ شہروں پر مبنی ہے۔


شہزادہ محمد بن سلمان نے اس بات کی طرف بھی نشاندہی کی ہے کہ حکمت عملی کے مزید منصوبے ہیں جن میں ملک کے تمام خطے شامل ہیں اور ریاض کی حکمت عملی کے بارے میں اپنی گفتگو میں مزید وضاحت کرتے ہوئے کہتے ہیں کہ ان کے پاس موجود تمام املاک ملازمتیں پیدا کرنے، معیشت کو ترقی دینے  سرمایہ کاری اور مواقع فراہم کرنے کے قابل ہیں؛ لہذا ہم ریاض کو غور سے دیکھ رہے ہیں۔(۔۔۔)


جمعہ 16 جمادی الآخر 1442 ہجرى – 29 جنوری 2021ء شماره نمبر [15402]


Related News



انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا