لبنان: سنٹرل بینک کے گورنر پر عوامی رقم ضائع کرنے کا الزام عائد

لبنان: سنٹرل بینک کے گورنر پر عوامی رقم ضائع کرنے کا الزام عائد

جمعہ, 29 January, 2021 - 16:30
لبنان کی ایک خاتون جج نے لبنان کے مرکزی بینک کے گورنر ریاض سلامہ اور لبنانی بینکاری نگران کمیٹی کی سربراہ مایا دباغ پر ملک کی طرف سے حمایت آفتہ ڈالر مشن کی انتظامیہ کے ذریعہ ملازمت میں غفلت برتنے، عوامی رقم ضائع کرنے اور اعتماد کا غلط استعمال کرنے کا الزام عائد کیا ہے۔

یہ الزام ماؤنٹ لبنان میں اپیل اٹارنی جنرل کی جج غادة عون کی طرف سے ہونے والی ابتدائی تحقیقات کے بعد سامنے آیا ہے اور یہ تحقیقات ایک ایسی رپورٹ کی بنیاد پر ہوئی ہیں جس میں ڈالر کے تبادلے میں ہونے والی فضلہ کارروائیوں کے بارے میں بات کی گئی ہے جسے مرکزی بینک نے حکومتی فیصلے کے ذریعہ کھانے اور دوائیں کی حمایت کے نگرانی میں کیا تھا۔
 
اس فائل کے ساتھ جوڈیشل ذرائع نے "الشرق الاوسط" سے گفتگو کرتے ہوئے انکشاف کیا ہے کہ یہ الزام ان اعداد وشمار پر مبنی ہے جو اس بات کی نشاندہی کرتے ہیں کہ سبسڈی والے ڈالر تقسیم کرنے کا عمل صوابدیدی تھا اور اس میں مالی اعانت مختص کرنے کے بجائے منافع کمانے کے لئے درجنوں خوش قسمت منی چینجرز شامل تھے بجائے اس کے اسے کھانے اور دواؤں میں استعمال کیا جائے اس کا غلط استعمال ہوا۔(۔۔۔)


جمعہ 16 جمادی الآخر 1442 ہجرى – 29 جنوری 2021ء شماره نمبر [15402]


Related News



انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا