سفارتی واقعہ سے متعلق اسرائیل نے متحدہ عرب امارات سے مانگی معافی

سفارتی واقعہ سے متعلق اسرائیل نے متحدہ عرب امارات سے مانگی معافی

ہفتہ, 30 January, 2021 - 18:00
اسرائیل نے اپنی حکومت کی وزارت صحت میں موجود ایک بڑی ذمہ دار کی طرف سے نشر کردہ بیانات کے بعد متحدہ عرب امارات سے سرکاری طور پر معافی مانگی ہے اور اس امید کا اظہار کیا ہے کہ اس معافی سے دونوں ممالک کے مابین سفارتی معاملہ ختم ہوجائے گا۔

تل ابیب کے سینئر ذرائع نے انکشاف کیا ہے کہ متحدہ عرب امارات نے اسرائیلی وزیر اعظم بینجمن نیتن یاہو اور وزارت خارجہ کے دفتر میں قومی سلامتی کونسل کے سامنے احتجاج کیا ہے اور اسرائیل میں صحت عامہ کی خدمات کی سربراہ ڈاکٹر شیرون ایلروئی پرائس کے بیانات کے بارے میں وضاحت طلب کی ہے جس میں انہوں نے کہا ہے کہ کورونا کی وجہ سے اسرائیل میں ہونے والی اموات میں اضافے کو دبئی جانے والی پروازوں کے تسلسل سے جوڑ دیا ہے۔


اسرائیلیوں نے اس بات کا اعتراف کرتے ہوئے جواب دیا ہے کہ اسرائیلی اہلکار کے بیانات غلط ہیں اور غلط فہمی پر مبنی ہیں اور ان لوگوں نے اس کے لئے معذرت بھی کر لی ہے۔(۔۔۔)


ہفتہ 17 جمادی الآخر 1442 ہجرى – 30 جنوری 2021ء شماره نمبر [15403]


انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا