لبنان میں کورونا اسکینڈل اور ورلڈ بینک کی طرف سے ملی دھمکی

لبنان میں کورونا اسکینڈل اور ورلڈ بینک کی طرف سے ملی دھمکی

بدھ, 24 February, 2021 - 11:15
قومی ویکسی نیشن کمیٹی کے سربراہ ڈاکٹر عبد الرحمن البزری نے احتجاج میں استعفی دینے کی دی دھمکی (رائٹرز)
گزشتہ روز لبنانی پارلیمنٹ کے سولہ اراکین نے شہریوں سے قبل ایوان نمائندگان میں کورونا ویکسین حاصل کیا ہے جس کی وجہ سے سیاسی طور پر بھی تنقید کا سامنا کرنا پڑا ہے اور عوام میں بھی عدم اطمینان کی لہر دوڑی ہے اور اس کی آواز عالمی بینک تک پہنچ چکی ہے جس نے اپنے ریجنل ڈائریکٹر سروج کمار جاہ کی زبانی دھمکی دی ہے اور کہا ہے کہ اگر منصفانہ اور مساوی ویکسی نیشن کے منصوبے پر ہونے والے اتفاق رائے کی خلاف ورزی ثابت ہوئی تو ویکسینیشن مہم کے لئے مالی امداد بند کردیا جائے گا۔

پارلیمنٹ کے سکریٹری جنرل عدنان ضاهر نے کل منگل کو اس بات کی تصدیق کی ہے کہ پارلیمنٹ میں چار ملازمین کے علاوہ 16 ارکان پارلیمنٹ جن کی عمر 75 سال سے زیادہ ہے ان کو پارلیمنٹ ہیڈ کوارٹر کے اندر ویکسین ملی ہے۔


اسی طرح لبنانی ایوان صدر نے یہ بھی اعلان کیا ہے کہ لبنانی صدر مائکل عون اور پہلی لبنانی مسز نادیہ عون کو صدر کی قریبی اور لیفٹیننٹ ٹیم کے دس ممبروں کے ساتھ "کورونا" ویکسین دی گئی ہے جنھوں نے ویکسی نیشن پلیٹ فارم پر مذکورہ قوانین کے مطابق اپنے نام درج کرائے تھے۔(۔۔۔)


بدھ 13 رجب 1442 ہجرى – 24 فروری 2021ء شماره نمبر [15429]


انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا