مروان خوری: عرب بحرانوں نے تخلیقی صلاحیتوں کو کیا چیلنج

مروان خوری: عرب بحرانوں نے تخلیقی صلاحیتوں کو کیا چیلنج

بدھ, 3 March, 2021 - 16:15
لبنانی فنکار مروان خوری نے کہا ہے کہ عرب دنیا میں سیاسی اور سماجی بحرانوں نے فن اور گلوکاری کے میدان میں تخلیقی صلاحیتوں کو محدود کردیا ہے اور الشرق الاوسط کو انٹرویو دیتے ہوئے انہوں نے اس بات پر زور دیا ہے کہ وہ گانے کے لئے اعلی ستاروں کے ساتھ تعاون کی تلاش میں نہیں ہیں تاکہ وہ ان کے الفاظ اور دھنیں اتنی ہی کر سکیں جتنی ان کی آوازوں کی تلاش ہو جو ان کے خیال کو بخوبی انداز میں پہنچا سکتی ہو۔

خوری نے یہ بھی واضح کیا ہے کہ خطے میں حالات کی خرابی کی وجہ سے عرب موسیقی اور گیت بحرانوں کا شکار رہیں گے اور ان کا یہ بھی کہنا ہے کہ ہمیں یہ تسلیم کرنا ہوگا کہ موجودہ صورتحال کی وجہ سے عرب موسیقی اور گیت کے سلسلہ میں عمومی بحران ہے کیونکہ جب تک مصائب، پریشانیوں اور بحرانوں میں زندگی گزارتا رہے گا اس وقت تک ایک موسیقار یا گانا نگار تخلیق فراہم نہیں کر سکے گا۔


خوری نے اپنے نئے رومانٹک گانے "ٹھہر میرے دل" کے بارے میں بات کرتے ہوئے کہا ہے کہ یہ ان گانوں میں سے ایک ہے جو میں نے آخری دور میں اپنے دل میں ریکارڈ کیا ہے اور مجھے یہ پسند ہے کہ یہ میرا 2021 کا پہلا گانا ہو کیونکہ یہ اس دور کے لئے موزوں ہے اور اس میں تمام محبت کرنے والوں اور محبت کرنے والوں کے لئے ایک خاص پیغام ہے اور خدا کا شکر ہے کہ یہ گانا مختلف سماجی رابطوں کی سائٹس کے ذریعہ میرے دوستوں اور مداحوں کے تبصروں کے مطابق قابل ذکر کامیابی حاصل کرنے میں کامیاب رہا ہے۔(۔۔۔)


بدھ 20 رجب 1442 ہجرى – 03 مارچ 2021ء شماره نمبر [15436]


انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا