عبد الرحیم دقلو نے بشیر کے زوال کی رات کا کیا انکشاف

عبد الرحیم دقلو نے بشیر کے زوال کی رات کا کیا انکشاف

جمعرات, 4 March, 2021 - 13:45
پہلی بار سوڈانی فوج کے ایک سینئر کمانڈر نے صدر عمر البشیر کی حکومت کے آخری گھنٹوں اور 3 جون 2019 کو جنرل کمانڈ کے سامنے دھرنا توڑنے والے اس قتل عام کے راز کے بارے میں دلچسپ تفصیلات کا انکشاف کیا ہے۔


ریپڈ سپورٹ فورسز کے نائب سربراہ لیفٹیننٹ جنرل عبد الرحیم حمدان دقلو نے الشرق الاوسط کو انٹرویو دیتے ہوئے کہا ہے کہ 6 اپریل کو انقلاب کی شدت کے ساتھ ہی فوجی رہنماؤں نے البشیر کو ہٹانے کا فیصلہ کیا اور سیکیورٹی اپریٹس کے سابق سربراہ صلاح عب داللہ قوش کو اس فیصلے سے آگاہ کرتے ہوئے اس کی ذمہ دای دی لیکن اس شخص نے انکار کردیا اور انھیں بتایا کہ وہ صدر کے ساتھ غداری نہیں کریں گے پھر وہ اس فیصلہ کو قبول کرنے پر مجبور ہو گئے کیونکہ اگر وہ ایسا نہیں کرتے تو البشیر کے ساتھ ان کو بھی جیل کا انتخاب کرنا پڑتا۔(۔۔۔)


جمعرات 21 رجب 1442 ہجرى – 04 مارچ 2021ء شماره نمبر [15437]


انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا