"ایسٹرازینیکا" کے لئے ایک نیا یورپی خطرہ

"ایسٹرازینیکا" کے لئے ایک نیا یورپی خطرہ

اتوار, 21 March, 2021 - 10:30
کل ہالنڈ میں "ایسٹرازینیکا" ویکسین کی ایک ویکسینیشن سینٹر کو دیکھا جا سکتا ہے (ای پی اے)
یوروپی کمیشن کی خاتون صدر عرسولا وان ڈیر لیین نے کل دھمکی دی ہے کہ اگر یورپی یونین نے صنعت کار کے ساتھ معاہدہ کرنے کی تاریخ پر اپنی ترسیل وصول نہیں کی تو "استرازینیکا" ویکسین کی برآمدات روک دیں گي اور یہ خوراک کی فراہمی کے سلسلہ میں ہونے والی تاخیر کی وجہ سے پیدا شدہ تنازعہ میں مزید اضافہ ہے۔

وان ڈیر لیین نے کہا کہ "یہ پیغام استرازینیکا کو دیا گیا ہے۔۔۔ دوسرے ممالک میں ویکسین کی فراہمی شروع کرنے سے پہلے یورپ کے ساتھ اپنے معاہدے کو پورا کریں اور اسی طرح" یورپی عہدیداروں نے بھی اس پر برہمی کا اظہار کیا کہ برطانوی سویڈش کمپنی باقی یورپی ممالک کی قیمت پر برطانیہ میں اپنا معاہدہ نافذ کرنے میں کامیاب ہوئی ہے۔


انہوں نے اشارہ کیا ہے کہ برطانوی قطرے پلانے کی مہم 26 ملین افراد سے تجاوز کر گئی ہے جبکہ یورپی ممالک اب بھی دس ملین خوراکوں کی دہلیز سے نیچے ہیں۔(۔۔۔)


اتوار 08 شعبان المعظم 1442 ہجرى – 21 مارچ 2021ء شماره نمبر [15454]


انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا