برہان نے ایتھوپیا پر سرحدی معاہدوں کو توڑنے کا الزام عائد کیا ہے

برہان نے ایتھوپیا پر سرحدی معاہدوں کو توڑنے کا الزام عائد کیا ہے

پیر, 22 March, 2021 - 13:45
سوڈان میں عبوری خودمختاری کونسل کے سربراہ عبد الفتاح البرهان نے ایتھوپیا پر الزام عائد کیا ہے کہ اس نے ان پچھلے عہد وپیمان کو توڑ دیا ہے جو اس نے سوڈان کے ساتھ کیا تھا۔

گزشتہ روز دارالحکومت خرطوم میں فوجی خطے میں افسروں، نان کمیشنڈ افسران اور فوجیوں سے خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ مسلح افواج سوڈانی سرحدوں کے اندر کھل چکے ہیں اور وہ اپنے عہدوں سے پیچھے نہیں ہٹیں گے کیونکہ وہ جنگی جارحیت پسند کے آغاز کے وقت سے ہی ظالم نہیں ہیں اور ان کا اسلحہ بنیادی طور پر حملہ پر نہیں بلکہ دفاع پر مبنی ہے۔


"العربیہ الحدث" چینل کے ذریعہ دی گئی اطلاع کے مطابق پرسو روز البرہان نے سوڈان کے فشقہ سرزمیں پر ایتھوپیا کے قبضے کے جواب میں کہا تھا کہ سوڈان کسی بھی قسم کی صورتحال کے لئے تیار ہے اور ساتھ ہی اعلان کیا ہے کہ سوڈان نے سرحد کی حد بندی سے متعلق ادیس ابابا کے ساتھ ہر طرح کے مذاکرات کو مسترد کردیا ہے اور انہوں نے فشقہ میں جو کچھ ہورہا ہے اس کی ذمہ داری ایتھوپیا پر ڈالی ہے۔(۔۔۔)


پیر 09 شعبان المعظم 1442 ہجرى – 22 مارچ 2021ء شماره نمبر [15455]


انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا