سعودی عرب نے نجی شعبے کے ساتھ شراکت کے لئے سب سے بڑا سرکاری پروگرام شروع کیا ہے

سعودی عرب نے نجی شعبے کے ساتھ شراکت کے لئے سب سے بڑا سرکاری پروگرام شروع کیا ہے

بدھ, 31 March, 2021 - 08:30
شہزادہ محمد بن سلمان کو کل "شریک" پروگرام شروع کرتے ہوئے دیکھا جا سکتا ہے (الشرق الاوسط)
سعودی عرب کے ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان بن عبد العزیز نے گزشتہ روز نجی شعبے کے ساتھ شراکت کے سب سے بڑے سرکاری پروگرام کی ابتدا کی ہے اور یہ کنگڈم وژن کے عزائم کو عملی جامہ پہنانے کے عملی اقدام میں کیا گیا ہے جس میں نجی شعبے کو عوامی شعبے کے لئے ایک لازمی شراکت دار کے طور پر دیکھا گیا ہے اور انہوں نے یہ بھی انکشاف کیا ہے کہ یہ پروگرام قومی معیشت میں مقامی کمپنیوں کی سرمایہ کاری کے حجم میں دس سال کے اندر اندر 5 کھرب ریال (1.3 ٹریلین) تک اضافہ کرے گا اور یہ 2030 تک سعودی عرب کی معیشت میں تقریبا 27 کھرب ریال (7 $ ڈالر) کے مجموعی اخراجات کے فریم ورک کے اندر ہے۔

ملک کے متعدد وزراء، کاروباری رہنماؤں اور بڑی کمپنیوں کے سربراہوں کی موجودگی میں ورچوئل میٹنگ کے دوران "شریک" پروگرام کے افتتاح کے موقع پر ولی عہد شہزادہ نے اس بات کی تصدیق کی ہے کہ یہ پروگرام حکومت اور نجی شعبے کے مابین شراکت کو فروغ دینے کے لئے کام کرے گا اور معیشت میں لچک کو بڑھانے اور خوشحالی اور پائیدار نمو کی حمایت کرنے کے اسٹریٹجک مقاصد کے حصول کو تیز کرے گا۔(۔۔۔)


منگل 18 شعبان المعظم 1442 ہجرى – 31 مارچ 2021ء شماره نمبر [15464]


انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا