جنوبی افریقہ میں پائے جانے والا کورونا وائرس فائزر ویکسین کو بنایا ناکام

جنوبی افریقہ میں پائے جانے والا کورونا وائرس فائزر ویکسین کو بنایا ناکام

پیر, 12 April, 2021 - 15:15
فرانس میں ایک بزرگ خاتون کو فائزر ویکسین لیتے ہوئے دیکھا جا سکتا ہے (اے ایف پی)
ایک تحقیق میں بتایا گیا ہے کہ جنوبی افریقہ میں پایا جانے والا کورونا وائرس کا تناؤ کم ہونے کے باوجود فائزر - بایونک ویکسین ناکام بنانے کے قابل ہے اور تل ابیب یونیورسٹی کے ذریعہ اسرائیل کے سب سے بڑے ہیلتھ کیئر ادارے "کللیٹ" کے تعاون سے ایک تحقیق کی گئی ہے جس میں ایسے 400 افراد شامل کیا گیا ہے جو ویکسین کی ایک یا دو خوراک لینے کے 14 دن یا اس سے زیادہ مدت کے بعد وائرس کے شکار ہو گئے ہیں اور ایسے متاثرہ افراد کے ایک گروپ کو بھی شامل کیا گیا ہے جن کو ویکسین کے حفاظتی ٹیکے نہیں لگائے گئے ہیں پھر ان دونوں کے موازنہ سے معلوم ہوا ہے کہ جن کو دو خوراکیں ملی ہیں ان کی نسبت ویکسین نہ لینے والے مریضوں کی نسبت 8 گنا زیادہ ہے۔

اس کے علاوہ تجارتی تصادم، ویکسین کی تیاری میں تاخیر اور ان میں سے کچھ کی حفاظت کے بارے میں حیرت کی وجہ سے یورپ ویکسینیشن مہموں میں تاخیر کا شکار ہے۔(۔۔۔)


پیر 30 شعبان المعظم 1442 ہجرى – 12 اپریل 2021ء شماره نمبر [15476]


انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا