اسرائیلی فوج نے دو قیدیوں کی تلاش میں جنین پر دھاوا بولنے کی دھمکی دی ہے

اسرائیلی فوج نے دو قیدیوں کی تلاش میں جنین پر دھاوا بولنے کی دھمکی دی ہے

جمعرات, 16 September, 2021 - 16:30
چھ فلسطینی قیدیوں میں سے ایک ایہم کمامجی کے اہل خانہ کو جنین کے قریب کفر دان میں خاندانی گھر پر ان کی تصویر لئے ہوئے دیکھا جا سکتا ہے (اے ایف پی)
اسرائیلی فوج نے بڑی فوجوں کے ساتھ جنین شہر میں داخل ہو جانے کی دھمکی دی ہے اور اس کا مقصد جلبوع جیل سے فرار ہونے والے قیدیوں کے وہاں پہنچنے کی تصدیق کے بعد ان کو گرفتار کرنا ہے۔

اسرائیلی چیف آف اسٹاف ایویو کوہوی نے عبرانی "چینل 12" کو انٹرویو دیتے ہوئے کہا ہے کہ قیدی زکریا الزبیدی سے پوچھ گچھ سے پتہ چلا ہے کہ قیدیوں نے جینین جانے کا منصوبہ بنایا تھا اور یہ ممکن ہے کہ کم از کم ایک قیدی پہلے ہی وہاں پہنچ چکا تھا اور اسے مدد مل رہی ہے اور انہوں نے مزید کہا کہ اگر اس بات کی تصدیق ہوجاتی ہے کہ دونوں قیدی جینن پہنچے ہیں تو فوج ان کو گرفتار کرنے کے لیے بڑی فوجوں کے ساتھ وہاں داخل ہونے کے لیے تیار ہے خواہ اس کی وجہ سے مغربی کنارے کے باقی حصے متاثر ہوں یا نہ ہوں اس سے کوئی فرق نہیں پڑتا ہے۔(۔۔۔)


جمعرات 08 صفر المظفر 1443 ہجرى – 16 ستمبر 2021ء شماره نمبر [15633]


انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا