افریقہ میں چین کے اثر ورسوخ کا مقابلہ کرنے کے لیے امریکہ کوشش کر رہا ہے

افریقہ میں چین کے اثر ورسوخ کا مقابلہ کرنے کے لیے امریکہ کوشش کر رہا ہے

ہفتہ, 20 November, 2021 - 14:45
اگرچہ بلنکن نے چین یا روس کا براہ راست ذکر کرنے سے گریز کیا ہے لیکن بائیڈن انتظامیہ کے افریقہ کے بارے میں نقطہ نظر کو اپنے حریفوں سے ممتاز کرنے کی کوشش کی ہے جن پر ریاست ہائے متحدہ امریکہ اپنے سیاسی مقاصد کو آگے بڑھانے کے لیے براعظم میں سرمایہ کاری کا استعمال کرنے کا الزام لگاتا ہے (اے ایف پی)

کل امریکی وزیر خارجہ انٹونی بلنکن کے بیانات نے افریقی براعظم میں چین اور کسی حد تک روس کے اثر ورسوخ کا مقابلہ کرنے کے لیے امریکہ کے عزم کی تجویز پیش کی ہے اگرچہ انہوں نے ان کا نام نہیں لیا ہے۔


بلنکن نے کل وعدہ کیا ہے کہ امریکہ افریقی ممالک کے ساتھ جیو پولیٹیکل مسائل کے بجائے مساوی سلوک کرے گا اور اس سے یہ ظاہر ہوتا ہے کہ صدر جو بائیڈن براعظم سے اپنی انتظامیہ کے وعدوں کی تصدیق کے لیے ایک امریکی- افریقی سربراہی اجلاس منعقد کرنے کا ارادہ رکھتے ہیں۔


امریکی وزیر خارجہ نائجیریا میں تھے جو کینیا کے بعد اپنے افریقی دورے کا دوسرا مرحلہ تھا جس میں سینیگال بھی شامل ہے، جہاں انہوں نے ایک تقریر کی جس کا مقصد بائیڈن انتظامیہ کی براعظم کے بارے میں پالیسی کا خاکہ پیش کرنا تھا اور انہوں نے مغربی افریقی ریاستوں کی اقتصادی گروپ (ECOWAS) کی بڑی شخصیات اور افریقی نوجوانوں سے خطاب کیا ہے۔(۔۔۔)


ہفتہ - 15 ربیع الثانی 1443 ہجری - 20 نومبر 2021ء شمارہ نمبر [15697]


انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا