امریکہ نے جوہری مذاکرات ناکام ہونے کی صورت میں فوجی آپشن کی دھمکی دی ہے

امریکہ نے جوہری مذاکرات ناکام ہونے کی صورت میں فوجی آپشن کی دھمکی دی ہے

جمعرات, 25 November, 2021 - 15:30
امریکی صدر جو بائیڈن کل واشنگٹن میں وائٹ ہاؤس میں خطاب کر رہے ہیں (اے ایف پی)
واشنگٹن نے اس عزم کا اظہار کیا ہے کہ اگر اگلے ہفتے ویانا میں دوبارہ شروع ہونے والی بات چیت ناکام ہو جاتی ہے تو ایران کے جوہری پروگرام کو جوہری بم کی تیاری کی سطح کی طرف پیش رفت کو روک دے گا۔

امریکی سنٹرل کمانڈ (سینٹ کام) کے کمانڈر جنرل کینتھ میکنزی نے اعلان کیا ہے کہ اگر مذاکرات ناکام ہوتے ہیں تو ان کی افواج ممکنہ فوجی آپشن کے لیے تیار ہیں اور میک کینزی نے ٹائم میگزین کو بتایا ہے کہ ہمارے صدر نے کہا ہے کہ ان کے پاس جوہری ہتھیار نہیں ہوں گے اور "سنٹرل کمانڈ کے پاس ہمیشہ مختلف قسم کے منصوبے ہوتے ہیں جن کو اگر ہدایت دی جائیں تو ان پر عمل درآمد کر سکتے ہیں۔


اسی سلسلہ میں ایران کے لیے امریکہ کے خصوصی ایلچی رابرٹ میلے نے زور دے کر کہا ہے کہ اگر تہران جوہری بم حاصل کرنے کے بہت قریب پہنچ جاتا ہے تو ان کا ملک خاموش نہیں رہے گا۔(۔۔۔)


جمعرات  -20   ربیع الثانی 1443 ہجری - 25 نومبر 2021ء شمارہ نمبر [15702]


انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا