لیبیا: اقوام متحدہ نے قانونی بحران کے بارے میں کی بات چیت

لیبیا: اقوام متحدہ نے قانونی بحران کے بارے میں کی بات چیت

منگل, 11 January, 2022 - 15:15
سٹیفنی ولیمز کو "لیبین پولیٹیکل ڈائیلاگ فورم" میں خواتین کے بلاک کے ساتھ اپنی میٹنگ کے دوران دیکھا جا سکتا ہے (ٹویٹر پر اقوام متحدہ کے اہلکار کا اکاؤنٹ)
لیبیا امور کے سلسلہ میں اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل کی مشیر سٹیفنی ولیمز نے ووٹرز کی مرضی کا احترام کرنے کی ضرورت پر دوبارہ زور دیا ہے اور ملک کے سرکاری اداروں کو درپیش قانونی بحران کے طور پر بیان کیے جانے والے مسئلے کو حل کرنے کے بارے میں بھی دوبارہ بات چیت کی ہے۔

جنیوا میں اقوام متحدہ کے مشن کے زیر اہتمام "لیبین پولیٹیکل ڈائیلاگ فورم" میں خواتین کے بلاک کے ساتھ کل شام ویڈیو کانفرنس کے ذریعے ایک مشاورتی سیشن کے دوران ولیمز نے ان 25 لاکھ لیبیائی باشندوں کی مرضی کا احترام کرنے پر زور دیا ہے جنہوں نے اپنا انتخابی کارڈ حاصل کیا ہے اور لیبیا کے قومی اداروں کو درپیش قانونی بحران سے نمٹنے کے لیے فوری اور سنجیدہ کوششیں کرنے کا بھی مطالبہ کیا ہے۔(۔۔۔)


منگل  08 جمادی الآخر 1443 ہجری  - 11  جنوری  2021ء شمارہ نمبر[15750]


انتخاباتِ مدير

ملٹی میڈیا